اسلام آباد دھرنا،قبائلی عوام کی امیدوں پر پانی بھر دیا گیا:انور زیب خان

اسلام آباد دھرنا،قبائلی عوام کی امیدوں پر پانی بھر دیا گیا:انور زیب خان

باجوڑ ایجنسی ( نمائندہ پاکستان )آسلام آباد دھرنے میں قبائل کے امیدوں پر پانی پھیر کر ان کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی گئی جو قبائل کے ساتھ دشمنی کے مترادف ہے ،انور زیب خان ۔اسلام آبادمیں قبائل کے سمندر کو تہس ونہس کرنا غداری ہے ان خیالات کا اظہار پاکستان تحریک انصاف کے سینئر رہنماء انورزیب خان نے صحافیوں کے ایک وفد کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا فاٹا میں رائج الوقت نظام سے تنگ مظلوم قبائل کا اسلام آباد دھرنے میں شرکت اس بات کی دلیل ہے کہ وہ اس منحوس نظام کو مزید قبول کرنے کیلئے تیار نہیں ہے ایم این اے شہاب الدین خان کے علاوہ شاہ جی گل آفریدی اور دیگر نے وزیر اعظم پاکستان کے ساتھ مزاکرات کرتے ہوئے غیر زمہ داری کا مظاہرہ کرتے ہوئے عین موقع پر ہتھیار ڈال دیے جس سے قبائل میں غلط فہمی اور بد ظنی کا پیدا ہونا فطری عمل ہے کیونکہ فاٹا سے اسلام آباد ڈی چوک تک قبائل کا سمندر امڈ آیا تھا جس میں طلباء تنظیموں کا کردار جدا گانہ اور انتہائی مخلصانہ تھا وزیر اعظم پاکستان کے ساتھ بے مقصد مزاکرات قبائل کے ساتھ دھوکہ اور ان کے زخموں پر نمک پاشی کے مترادف ہے ماضی کی طرح ایک بار پھر منظم سازش کے تحت قبائل کو تاریکیوں میں دھکیل دیا گیا ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا موجودہ حکومت ایف سی آر کے خاتمے میں ایک فیصد بھی مخلص نہیں ہے ایک کروڑ قبائل کے جائز مطالبے کو نظر انداز کر کے ان کی دل آزاری کی گئی اس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے انہوں نے اس عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ کالے قانون کے خلاف ایک منظم تحریک شروع کر کے اس کے تابوت میں آخری کیل ٹھونک دینگے ۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...