پی ٹی آئی نے 70سال سے رائج شخصیء اقتدار کا خاتمہ کیا:اسد قیصر

پی ٹی آئی نے 70سال سے رائج شخصیء اقتدار کا خاتمہ کیا:اسد قیصر

ٹوپی ( نامہ نگار) کارکن پارٹی کا قیمتی اثاثہ ہے پی ٹی آئی نے صوبہ سے گزشتہ 70سالوں کے رائج شخصی اقتدار کا خاتمہ کیا صوبہ سے کرپشن بد عوانیوں اور غبن کو جڑ سے نکال کر باہر پھینک دیا۔ اسد قیصر کا بام خیل میں مزمل خان کے ڈیرے پر ناراض ارکان سے خطاب۔ تفصیل کے مطانق سپیکر صوبائی اسمبلی اسد قیصر نے بام خیل میں مون لائیٹ پبلک سکول اینڈ کالج کے منجنگ ڈائریکٹر اور ممتاز سماجی شخصیت مزمل خان کے ڈیرے پر پارٹی کے نارض ارکان سے ملاقات کی اور ناراض ارکان کے ایک ایک سے ان کے شکایات سنیں اور ہر ایک کو ان کے جائز شکایات کا جلد سے جلد ازالہ کرنے کا یقین دلایا اسد قیصر نے کہا کہ یہاں پر اقتدار کے لیے باریاں مقرر کی گئی تھی پی ٹی آئی نے رائج شخصیتی اقتدار کا خاتمہ کیا اور اثار یہ بھی بتارہے ہیں کہ 2018میں پی ٹی آئی کی حکومت ہو گی زرداری نوازشریف اور فضل الرحمٰن کے ساتھ ابھی سے فکر لا حق ہو گئی ہے کیونکہ زرداری کے ساتھ 19شوگر ملز اور نوازشریف کے ساتھ اب شور کمپنیوں کا حساب ہو گا انہوں نے کہا کہ ہماری حکومت میں نرسری تا پنجم ناظرہ اور قرآن مجید اور چھٹی سے دسویں تک قرآن مجیدبا ترجمہ لازمی قرار دیا ہے اس طرح چارہزار مساجد کو جلد ہی شمسی توانائی پر منتقل کیا جائے گا ساتھ ہی نجی سود والی کاروبار پر مکمل پابندی عائد کی ہے مولانا فضل رحمٰن نے اپنے دور اقتدار میں سوائے اس کے کہ جنرل مشرف کو پانچ سال کے لیے باوردی صدر تسلیم کی سود کو جائز قرار دینے کے لیے سپریم کورٹ میں رٹ دائر کرنے والے نواز شریف کے ساتھ اتحاد کیا اور حلف سے ختم نبوت کے پیراگراف کے خاتمے پر خاموش تمشائی کا کردار اداکیا

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...