گومل یونیورسٹی عظیم درس گاہ ہے ،مولانا عبید الرحمان

گومل یونیورسٹی عظیم درس گاہ ہے ،مولانا عبید الرحمان

ڈیرہ اسماعیل خان (بیورورپورٹ) جے یو آئی کے مر کزی رہنماء و ضلع کونسل میں اپوزیشن لیڈر مولانا عبید الرحمان نے کہا ہے کہ گومل یونیورسٹی ایک اعلیٰ تعلیمی ادارہ ہے اور اس کی تر قی کے لئے تمام سیا سی جما عتیں کوششیں کرتی ہیں لیکن بد قسمتی سے موجودہ وائس چانسلر اس یونیورسٹی کو ایک مخصوصی سیا سی جما عت کا لیبل لگا نے کی کوشش کر رہے ہیں جو کہ اس مادر علمی کے ساتھ بہت بڑی زیا دتی ہے گورنر خیبر پختونخواہ اقبال ظفر جھگڑا یونیورسٹی کو سیا ست کی نذر ہو نے سے بچا نے اور یونیورسٹی کے معاملات کی جانچ پڑتال کیلئے فور ی طور پر گورنر انسپیکشن ٹیم بھیجیں وہ ڈیر ہ میں کارکنوں سے گفتگو کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ وائس چانسلر کا پی ٹی آئی کے چےئر مین عمران خان کو بلین ٹر ی پراجیکٹ کا لیبل لگا کر یونیورسٹی میں مدعو کر نے سے ایسے محسوس ہوتا ہے جیسے وائس چانسلر اور پرو وائس چانسلر عمران خان کے انتشار کی پالیسیوں کی تائید کر رہے ہو ں انہوں نے کہا کہ یونیورسٹی کی تقریب میں پی ٹی آئی کے سینکڑو ں آؤٹ سائیڈ ر کارکنوں کو بلانا اور ان سے سیا سی قائدین کے خلاف نازیبا نعر ے لگواکر خوش ہو نا عمران خا ن اور یونیورسٹی انتظامیہ کیلئے انتہائی شرمناک بات ہے جو کہ یونیورسٹی کی تباہی کا آغاز ہے عمران خا ن کو سیاسی قائدین کے خلاف نعرے کو نوجوانوں کے سیاسی شعور سے تعبیر دینا عمران خا ن کے منفی ذہن کی عکاسی کرتا ہے انہوں نے کہا کہ یونیورسٹی میں مختلف خیال اور مختلف نظریات کے اساتذہ و طلبہ زیر تعلیم ہیں وائس چانسلر یونیورسٹی انتظامیہ عمران خان کے اس اقدام سے یونیورسٹی کے اندر تناؤ کی کیفیت پیدا ہو گئی ہے حا لات خرا ب ہو نے اور تمام تر نقصانات کی ذمہ داری یونیورسٹی انتظامیہ پر ہو گی ہم وائس چانسلر اور پرو وائس چانسلر کی ایسی حرکات کو قطعاً قبول نہیں کرینگے انہوں نے کہا کہ وائس چانسلر کو اس بات پر شر م آنی چاہیے کہ ان کو کے پی کے کا وزیر ما ل ہدایات دے رہا تھا ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...