انچارج مٹہ اشاڑی چوکی بے تاج بادشاہ بن گیا

انچارج مٹہ اشاڑی چوکی بے تاج بادشاہ بن گیا

مٹہ(نمائندہ پاکستان) انچارج مٹہ اشاڑی چوکی بے تاج بادشاہ بن گیا،عزت دارشریف شہریوں کو بلا وجہ تنگ کر نا روز کا معمول بن گیا،عوام کاپولیس کے اعلی حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ تفصیلات کیمطابق مٹہ تحصیل کے اشاڑی چوکی کے انچارج تھانیدار حبیب الرحمان اور حوالدار سجادجوانی کے جوش کے وجہ سے علاقے کا بے تاج بادشاہ بن گئے موصوف کا درشخیلہ گاوں ودیگر مضافای علاقوں میں معصوم اور غریب شہریوں کو تنگ کر نا روز مرہ کا معمول بن گیا ،موصو ف اپنے زاتی گاڑی ویڈز کرولا میں گاوں کے اندر کہی بھی کھڑا ہو تا رہتا ہے اور راستے پر اتے جاتے لوگوں کو تلاشی کے بہانے بلا وجہ تنگ کرتے ہیں جبکہ موصوف کا خود اٹھنا بیٹھنا ایسے محفلوں میں ہو تا ہے جو چرس اور ائس کے مانے ہوئے ڈیلر ہے اسی طرح گاوں درشخیلہ ،کوزہ درشخیلہ اور بازخیلہ جو کے اشاڑی چوکی کے حدود میں اتے ہے میں نشئے کا ملنا عام سی بات ہو گئی ہے،عوام میں خد شات پائے جاتے ہیں کہ کہی اشاڑی چوکی کے زمہ داران خود ہی نشئے کے بیچھنے میں ملوث تو نہیں،اسی طرح علاقے کے خوبرو کمسن لڑکوں سے تھانیدار کے حوالے سے یہ شکایت سننے میں ائی ہے کہ موصوف کا تلاشی کے بہانے حرکات اور گفتگو قابل برداشت نہیں ہوتے ،جبکہ اپنے زاتی موبائل میں لڑکوں کے تصاویر بھی بنالیتا ہے جس کا مقصد سمجھ سے بالاتر ہے اور یہ کام کسی بھی مہذب معاشرے میں برداشت کے قابل نہیں ،علاقہ عوام نے ڈی پی او سوات،ایس پی اپر سوات ودیگر پولیس کے بالا حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ اشاڑی چوکی پر تعینات تھانیدار حبیب الرحمان اور حوالدار سجاد کے خلاف فوری طور پرکاروائی کر کے کوارٹر گارڈ کیا جائے جبکہ دونوں کے خلاف انکوائری شروع کر کے سزا دی جائے،بصورت دیگر عوام نے شدید احتجاج کے فھمکی دی ہیں۔۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...