صوابی ،نظامت انتخابات ،حکم امتناعی حاصل کرنے پر ملتوی

صوابی ،نظامت انتخابات ،حکم امتناعی حاصل کرنے پر ملتوی

صوابی (بیورورپورٹ) تحصیل کونسل صوابی کے نظامت کے انتخابات سابق ناظم واحد شاہ کا پشاور ہائی کورٹ سے حکم امتناعی حاصل کرنے پر ملتوی ،الیکشن کمیشن کے احکامات کے مطابق بدھ کے روز تحصیل کونسل صوابی کے نظامت کے لئے انتخابات ہونا تھا جس پر سابق تحصیل ناظم صوابی واحد شاہ نے پشاور ہائی کورٹ سے حکم امتناعی حاصل کی، حکم امتناعی کا آرڈر ملتے ہی الیکشن کمیشن صوابی نے انتخابات ملتوی کرنے کا اعلان کردیا ،تفصیلات کے مطابق جماعت اسلامی نے اپنے ناظم واحد شاہ کے خلاف تحریک عدم اعتماد کامیاب کراکے تحصیل کونسل صوابی کے نظامت کے لئے اقبال زادہ کو نامزد کیا تھا جبکہ تحریک انصاف نے اکرام کو نامزد کیا تھا ،جماعت اسلامی کے نامزد امیدوار اقبال زادہ کو تحصیل کونسل کے22 ممبران میں سے 12 ارکان کی حمایت حاصل تھی ،سابق ناظم واحد شاہ نے کل بدھ کے روز ہونے والے انتخابات کے خلاف پشاور ہائی کورٹ سے رجوع کیا تھا جس پر پشاور ہائی کورٹ نے حکم امتناعی جاری کرتے ہوئے الیکشن کو ملتوی کرنے کے احکامات جاری کئے اور اس کے لئے آئندہ تاریخ 26 مقرر کردی گئی ،یاد رہے کہ6 ستمبر کو جماعت اسلامی ،پی ٹی آئی ،جے یو آئی ،مسلم لیگ اور پیپلز پارٹی نے جماعت اسلامی کے تحصیل ناظم واحد شاہ اور اے این پی کے نائب ناظم گوہر خان کے خلاف تحریک عدم پیش کیا تھا جس میں بائیس میں سے 16 ارکان نے جماعت اسلامی کے ناظم واحد شاہ اور 15 نے اے این پی کے نائب ناظم گوہر خان کے خلاف عدم اعتماد کا اظہار کیاتھا،اے این پی کے نائب ناظم گوہر خان نے پہلے ہی پشاور ہائی کورٹ سے حکم امتناعی حاصل کی ہے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...