پشاور میں ٹرانسپورٹرز کا نجی اڈوں اور گیس قیمتوں اضافہ کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

پشاور میں ٹرانسپورٹرز کا نجی اڈوں اور گیس قیمتوں اضافہ کیخلاف احتجاجی ...

  



پشاور( سٹی رپورٹر) ٹرانسپورٹ برادری نے جی ٹی روڈ پشاور پر قائم نجی اڈوں ، سی، بی ، ڈی کلاس پرمٹ ریونیول بندش، پرمٹ فیس میں اضافے اور سی این جی قیمتوں میں اضافے کیخلاف جنرل بس سٹینڈ سے گاڑیوں کے ہمراہ ریلی نکال کر ریجنینل ٹرانسپورٹ اتھارٹی کے دفترکے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا۔ احتجاجی مظاہرے کی قیادت پبلک ٹرانسپورٹ اونر ایسوسی ایشن کے صدر خان زمان آفریدی ، جنرل سیکرٹری شیرزادہ، متحدہ ٹرانسپورٹ ایسوسی ایشن کے صدر نور مہمند، اسلام آباد راولپنڈی ہائی ایس بکسہ ایسوسی ایشن کے صدر محمد عالم اور لوکل ٹرانسپورٹ ایسوسی ایشن کے صدر یارمحمد آفریدی نے کی جس کے ہمراہ دوسو ہائی ایس گاڑیوں کی جلوس میں ڈارئیوروں اور مالکان نے شرکت کی۔ مظاہرین نے جی ٹی روڈ پرگاڑیوں کی ریلی نکال کر شیرشاہ سوری روڈ پر آر ٹی اے دفتر بنولنٹ فنڈ بلڈنگ پہنچ گئی جہاں پرگیٹ کے سامنے دھرنا جبکہ گاڑیوں کودفترکے سامنے کھڑی کی۔ مظاہرے کی وجہ سے ٹریفک کا نظام درہم برہم ہوگیا، شیرشاہ سوری روڈ، خیبربازار اور پشاور صدر میں گاڑیوں کی لمبی لمبی قطاریں لگ گئی جس کے باعث لوگ پبلک ٹرانسپورٹ سے اترکر پیدل چلنے پر مجبور ہوگئے۔ مظاہرین نے کہاکہ حکومت نے پرمٹ ریونیول فیس میں بے تحاشہ اضافہ کردیاہے جبکہ بی، سی اور ڈی کلاس پرمٹ بند کردی۔ مظاہرین نے کہاکہ محکمہ ٹرانسپورٹ اور ضلعی انتظامیہ نے جی ٹی روڈ پر نجی ٹرانسپورٹ اڈوں کی اجازت دی ہے جس سے سرکاری اڈوں کے ٹرانسپورٹروں کاکاروبار ٹھپ پڑگیا ہے۔ انہوں نے آر ٹی اے سیکرٹری ندیم شاہ سے مطالبہ کیاکہ نجی اڈوں کیخلاف ایکشن لیں، بی، سی اور ڈی کلاس پرمٹ بندش ختم کرکے ریونیول فیس پنجاب کی طرح گاڑیوں کی ماڈؒ ل کی بجائے کنڈیشن پر کریں تاکہ ٹرانسپورٹر بے روزگار ہونے سے بچ سکیں، انہوں نے حکومت سے سوئی گیس کی قیمتوں میں حالیہ اضافہ واپس لینے کا مطالبہ کیاہے جس کے بعد پرامن طور پر منشتر ہوگئے۔ مظاہرین کی جانب سے شیرشاہ سوری روڈ بند کرنے کے باعث ڈسٹرکٹ، ٹریفک پولیس اور محکمہ ٹرانسپورٹ کی ڈوریں لگ گئی جبکہ سارا دن ٹریفک جام کا مسئلہ حل نہ ہوسکا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...