وہاڑی ‘ ہیڈ مسٹریس ‘ ٹیچر کیخلاف سٹوڈنٹس پر تشدد کا الزام ‘ انکوائری کمیٹی تشکیل

وہاڑی ‘ ہیڈ مسٹریس ‘ ٹیچر کیخلاف سٹوڈنٹس پر تشدد کا الزام ‘ انکوائری کمیٹی ...

  



وہاڑی(بیورورپورٹ+نما ئندہ خصوصی)وہاڑی کے نواحی گاؤں چک نمبر569ای بی کی رہائشی شہنازکوثرکے گورنمنٹ ایلیمنٹری سکول کی ہیڈمسٹریس اور ٹیچرکے خلاف بیٹیوں(بقیہ نمبر44صفحہ12پر )

پرتشددکاالزام،ڈی سی کمپلیکس کے سامنے احتجاج مظاہرہ،چیف ایگزیکٹو اتھارٹی ایجوکیشن کوکاروائی کیلئے درخواست دے دی۔سی ای او نے انکوائری کمیٹی تشکیل دے دی۔تفصیل کے مطابق نواحی گاؤں کی رہائشی گزارشہنازکوثرنے اپنی بیٹیوں فوزیہ بی بی،صوبیہ بی بی کے علاوہ اہل علاقہ محمدانور،فوجی منظورحسین،صداقت حسین،نعمان اسلم ، محمدطارق ، عرفان شاہد،اصغرعلی بھٹی ، نذیر حسین ، رمضان علی اورزاہدبھٹی کے ہمراہ ڈی سی کمپلیکس کے سامنے احتجاج کرتے ہوئے موقف اختیارکیاکہ اس کی دوبیٹیاں صوبیہ بی بی چھٹی اورفوزیہ بی بی ساتویں کلاس کی طالبات ہیں اور گورنمنٹ ایلیمنٹری سکول 569ای بی میں زیرتعلیم ہیں سکول کی ٹیچرعظمٰی میری بیٹیوں کوتعلیم کے بجائے اپنے چھوٹے بچوں کوکھلانے اورگھریلوکام کاج میں مصروف رکھتی ہے اس کے علاوہ کلاس روم میں اپنے پاؤں دبانے پرمجبورکرتی ہے جس کی وجہ سے ان کی تعلیم کانقصان ہورہاہے میری بیٹیوں نے کام کاج سے انکارکیاتوٹیچرنے مبینہ طورپرطالبات کی ڈانٹ ڈپٹ کی صورتحال کاعلم ہونے پرجب میں نے ٹیچرکوسمجھانے کی کوشش کی تواس نے میری بیٹیوں کومبینہ طورپر ڈنڈے کے ساتھ تشددکانشانہ بنایاجس کی وجہ سے میری بیٹی فوزیہ کے بائیں ہاتھ کاانگوٹھافریکچرہوگیاجس کی شکایت سکول کی ہیڈمسٹریس نازیہ سے کی تواس نے مبینہ طورپرٹیچرکے خلاف نوٹس لینے کے بجائے ٹیچرعظمٰی سے ملی بھگت کرکے دونوں بیٹیوں کوسکول سے نکادیا۔سی ای اوایجوکیشن شوکت علی شیرانی سے رابطہ کرنے پرانہوں نے بتایاکہ درخواست پرانکوائری کمیٹی تشکیل دے دی ہے اورانکوائری میرٹ پرہوگی اورالزام ثابت ہونے پرکسی ساتھ رعایت نہیں برتی جائے گی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...