ٹیل کے کاشتکا روں کو مسائل کے حل کی یقین دہانی پر دھرنا ملتوی

ٹیل کے کاشتکا روں کو مسائل کے حل کی یقین دہانی پر دھرنا ملتوی

  



ملتان ( سپیشل رپورٹر)48گھنٹے گزر جانے کے بعد بھی کاشتکاروں کا محکمہ انہار کے آفس کے باہر دھرنا جاری رہا ۔انہار انتظامیہ کی جانب سے گزشتہ شام ایک ہفتہ تک مسئلہ حل کرنے کی یقین دہانی پر احتجاج دھرنا عارضی طور پر ملتوی کردیا گیا ہے قبل ازیں کاشتکار دو روز قبل صبح 9 بجے سے محکمہ(بقیہ نمبر45صفحہ12پر )

انہار کے دفتر کے باہر دھرنا دیئے بیٹھے تھے مظاہرین کو بے حس انتظامیہ کی جانب سے گزشتہ روز شام تک مسئلہ کے حل کی یقین دہانی کروئی گئی تھی محکمہ انہار کے دفتر کے باہر سڑک کنارے بیٹھے دھرنا میں شامل بزرگ،نوجوان ناشتہ کرنے اور اخبار پڑھنے میں مصروف دکھائی دیئے دھرنے کے شرکاء کاکہنا تھا کہ شجاع آباد میں مٹوٹلی مائنز ٹیل،موضع لسوڑی اور اوباڑہشمالی 5سال سے پانی سے محروم ہیں۔2ہزار ایکڑ کاشت کا رقبہ ہے لیکن پانی صرف 100ایکٹر جتنا دیا جاتا ہے،با اثر زمیندار محکمہ انہار کے افسران کو رشوت دے کر ہماری زمینوں تک پانی نہیں پہنچنے دیتے متعدد بار درخواستیں دے چکے 5سال سے ہمیں پانی سے محروم رکھا گیا ہے جس سے ہماری زمینیں بنجر ہوچکی ہیں،متاثرہ کاشتکاروں نے وزیر اعظم پاکستا ن اور وزیر اعلی پنجاب سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیاتھا ۔باآلاخر انہار انتظامیہ کی جانب سے دھرنے کے شرکاء متاثرہ کاشتکاروں کو ایک ہفتے کے اندر اندر ان کا مسئلہ حل کرنے کی یقین دہانی کرائی گئی جس کے بعد انھوں نے عارضی طور پر احتجاجی دھرنا ملتوی کردیا ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...