سیاست سے بالاتر ہوکر عوام کی خدمت کی جائے گی،سعید غنی

سیاست سے بالاتر ہوکر عوام کی خدمت کی جائے گی،سعید غنی

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر) وزیر بلدیات سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ کراچی سمیت سندھ بھر میں سیاست سے بالاتر ہوکر عوام کی خدمت کی جائے گی۔ مئیر کراچی اوردیگر تمام اضلاع کے مئیر اور چیئرمین سے ملاقاتوں کا سلسلہ شروع کیا گیا ہے اور 2013 کے بلدیاتی قانون کے دائرے میں رہتے ہوئے نچلی سطح تک تمام اختیارات منتقل کئے جارہے ہیں۔ مئیر کراچی وسیم اختر کے آج کی ملاقات انتہاہی سود مند رہی ہے اور اس بات پر اتفاق ہوا ہے کہ کراچی کے تمام مسائل کا مل جل کر حل نکالا جائے گا۔ کراچی میں پینے کے صاف پانی کے مسئلے کے حل کے لئے اقدامات کئے جارہے ہیں اور اس سلسلے میں مختلف طویل اور قلیل مدت کے منصوبوں پر کام جاری ہے۔ کراچی میں کتوں کے کاٹنے کے واقعات کے ازالے کے لئے ان کتوں کو پکڑ کر شہر سے باہر منتقل کرنے سمیت دیگر پر غور کیا جارہا ہے۔ مئیر کراچی اور میری سیاسی جماعتیں اور ہمارے منشور بے شک علیحدہ علیحدہ ہیں لیکن ہماری انتظامی اور سرکاری ذمہ داریاں ایک ہی ہیں اور ان میں کوئی سیاسی مداخلت نہیں ہوگی۔ بلدیاتی نظام کوئی آسمانی سہیفا نہیں ہے آئین میں اگر 21 ترامیم اب تک ہوسکتی ہیں تو اس میں بھی ہوسکتی ہیں لیکن قانون کے دائرے میں رہ کر اسمبلی کے ذریعے ہی اس میں تبدیلیاں ممکن ہیں میرے یا مئیر کراچی کے چاہنے سے یہ تبدیلیاں نہیں ہوسکتی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعرات کو کے ایم سے کے مرکزی دفتر میں مئیر کراچی وسیم اختر سے ملاقات کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ قبل ازیں وزیر بلدیات سندھ جب کے ایم سی کے مرکزی دفتر پہنچے تو مئیر کراچی وسیم اختر اور دیگر افسران نے صوبائی وزیر کو خوش آمدید کہا۔ اس موقع پر دونوں رہنماؤں کے مابین ایک گھنٹے کی طویل ون ٹو ون ملاقات ہوئی۔ ملاقات میں دونوں رہنماؤں نے کراچی کے مسائل اور اس کے حل کے حوالے سے تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔ اس موقع پر وسیم اختر نے کراچی میں مسائل کے حوالے سے درپیش مسائل پر صوبائی وزیر بلدیات کو تفصیلی بریفنگ دی۔ بعد ازاں دونوں رہنماؤں نے مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے اس عزم کا اعادہ کیا کہ شہر میں درپیش مسائل اور عوام کو ریلیف کی فراہمی کے لئے دونوں اپنی اپنی سیاسی وابستگیوں سے بالاتر ہوکر کام کریں گے۔ اس موقع پر صوبائی وزیر بلدیات سعید غنی نے کہا کہ آج تک یہ تاثر دیا جاتا رہا ہے کہ مئیر کراچی سے میری ملاقات نہ ہونے کے پیچھے کوئی سبب ہے لیکن میں اس تاثر کی مکمل نفی کرتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ مئیر کراچی شہر کے جب کہ میں وزیر بلدیات پورے صوبے کا وزیر ہوں۔ انہوں نے کہا کہ آج پورے صوبے میں مئیر کراچی پہلے مئیر ہیں، جس سے میں باقاعدہ ملاقات ہورہی ہے اس سے قبل کراچی میں پیپلز پارٹی کے ڈی ایم سیز کے چئیرمین ہوں یا صوبے کے دیگر ڈسٹرکٹ جہاں پیپلز پارٹی کے مئیر یا چیئرمین ہو کسی سے بھی ملاقات نہیں کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج کی ملاقات ہماری اچھے ماحول اور سود مند رہی ہے اور ملاقات میں مئیر کراچی نے شہر میں انہیں درپیش مسائل سمیت تمام امور پر تفصیلی بات چیت کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں نے ملاقات میں انہیں محکمہ بلدیات اور سندھ حکومت کے تحت کراچی میں جاری منصوبوں اور آئندہ کے منصوبوں سے بھی آگاہی فراہم کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ بات واضح ہے کہ شہریوں اور صوبے کے مفاد میں ہماری کوئی لڑائی نہیں ہے اور ہم نے آج بھی اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ تمام تر سیاسی وابستگیوں سے بالاتر ہوکر ہم اس شہر اور صوبے کی خدمت مل جل کر کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ میں نے مئیر کراچی کو مکمل طور پر یقین دہانی کرائی ہے کہ لوکل گورنمنٹ ایکٹ 2013 میں جو جو اختیارات مئیر کراچی کو حاصل ہیں وہ تمام اختیارات انہیں ملیں گے اور اگر اس میں کسی قسم کی کوئی رکاوٹ ہے تو وہ انہیں دور کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہم دونوں آئندہ چند روز میں کراچی کی تمام ڈی ایم سیز کے چئیرمین سے بھی ملاقات کریں گے اور ان کے مسائل کو بھی مل جل کر حل کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ گذشتہ دور وز کے دوران میں نے اور مئیر کراچی نے دو علیحدہ علیحدہ اجلاس میں شہر میں ٹریفک کے نظام کی بہتر ی اور تجاوزات کے خاتمے کے لئے حکمت عملی مرتب کی ہے اور اس پر بھی ہم مل جل کر کام کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ شہر میں گذشتہ ڈیڑھ ماہ کے دوران غیر قانونی تعمیرات کے خلاف جو آپریشن شروع کیا گیا ہے اور جتنی غیر قانونی تعمیرات اس دوران توڑی گئی ہیں اس کی ماضی میں مثال نہیں ملتی۔

مزید : کراچی صفحہ اول