”ہوٹل سے سٹیڈیم تک سفر میں بہت وقت صرف ہوتا رہا اور۔۔۔“ سری لنکا کے چیئرمین آف سلیکٹرز نے بھی انتہائی افسوسناک بات کہہ دی، پاکستانیوں کے دل توڑ دئیے

”ہوٹل سے سٹیڈیم تک سفر میں بہت وقت صرف ہوتا رہا اور۔۔۔“ سری لنکا کے چیئرمین ...
”ہوٹل سے سٹیڈیم تک سفر میں بہت وقت صرف ہوتا رہا اور۔۔۔“ سری لنکا کے چیئرمین آف سلیکٹرز نے بھی انتہائی افسوسناک بات کہہ دی، پاکستانیوں کے دل توڑ دئیے

  


کولمبو (ڈیلی پاکستان آن لائن)سری لنکن کرکٹ بورڈ کے صدر کے بعد چیئرمین آف سلیکٹرز اشانتھا ڈی میل نے بھی دورہ پاکستان کے حوالے سے افسوسناک بیان جاری کر دیا ہے جس پر پاکستانی عوام بھی حیرت زدہ ہیں۔

انہوں نے کہا ہے کہ ہوٹل سے میدان تک آنے جانے میں بہت وقت صرف ہوتا رہا،پہلے سیکیورٹی مراحل مکمل کئے جاتے اور روڈز کلیئر ہوتے جس کے بعد سفر کیا جاتا جبکہ بس کے اندر بھی چلنے پھرنے کی اجازت نہیں ہوتی تھی، یہ قطعی طور پر آسان نہیں ہے،ابھی تو چند روز کیلئے گئے اور میچ بھی ون ڈے اور ٹی 20 تھے، ٹیسٹ میچ پریکٹس سیشنز کے بغیر نہیں کھیلا جا سکتا، 5روز تک آنا جانا ہوگا، ٹیم کا قیام بھی 15دن کیلئے ہونا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان نے مشکل وقت میں ہماری مدد کی،ہم سیکیورٹی کی وجہ سے پیش آنے والے مسائل کو برداشت کرنے کیلئے تیار تھے لیکن دیکھنا ہے کہ ایسا کس حد تک کرسکتے ہیں، انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی کے عمل میں کردار ادا کرنا ہمارا فرض تھا اور اس سے دیگر ملکوں کو بھی حوصلہ ملے گا، ہوسکتا ہے کہ اگلے سال آسٹریلیا یا انگلینڈ کی ٹیمیں بھی آ جائیں۔

مزید : کھیل


loading...