افسوس!آٹا80، چینی 110روپے کلو تک پہنچ گئی،لاہور میں پھر بھی سناٹا ہے:سراج الحق

افسوس!آٹا80، چینی 110روپے کلو تک پہنچ گئی،لاہور میں پھر بھی سناٹا ہے:سراج الحق

  

 لاہور(نمائندہ خصوصی) امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ قوم کو ٹائیگرز فورس کی نہیں، سستی اشیاء کی ضرورت ہے، ہر حکومت نے اپنی فورس بنائی جس نے سب کچھ ہڑپ کر کے عوام کی زندگی اجیرن کردی، حکومت کے ٹائیگرز نے تو باہر سے ملنے والی امداد کو بھی نہیں چھوڑا، حکمران باہر سے میٹھے اور اندر سے کڑوے ہیں، عوام بھی اپنے قول و فعل سے باہر نکلیں، سانپوں کے منہ میں دودھ ڈالنے کی بجائے اپنی آنے والی نسلوں کے مستقبل کی فکر کریں، حکومت عوام پر مہنگائی کے کوڑے برسا رہی ہے، جماعت اسلامی بڑھتی ہوئی مہنگائی کے خلاف سخت احتجاج کرے گی اور ملک بھر میں عوام کو منظم کیا جائے گا، علمائے کرام قومی یکجہتی اور اتحاد کو قائم رکھنے اور فرقہ واریت کو ختم کرنے میں اپنا کردار ادا کریں۔گزشتہ روزیہاں فیملی گالا پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے سراج الحق نے کہاکہ نالائق اور نااہل حکمرانوں سے چھٹکارا حاصل کرنا ضروری ہو گیاہے۔ اگر یہ حکومت مزید کچھ عرصہ رہی تو عوام بھوکے مرنے لگیں گے۔ وزیراعظم ان ٹائیگرز کو اشیاء کی قیمتیں معلوم کرنے پر لگا رہے ہیں جو پہلے ہی آٹا چینی کھا گئے ہیں۔ لاہور میں 80 روپے کلو آٹا اور پھر بھی سناٹا ہے۔ چینی 110 روپے کلو تک پہنچ گئی ہے۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ چینی 40 روپے اور آٹا 30 روپے اور دال 20 روپے فی کلو کی جائے تاکہ لوگ عزت کے ساتھ رہ سکیں۔دنیا پر فرعونی نظام مسلط ہے مگر آج کے ابو جہل کے خلاف کوئی بات کرنے والا نہیں۔ دنیا بھر میں ڈیڑھ ارب سے زیادہ مسلمان ہیں مگر کسی مسلمان ملک کے پاس ویٹو پاور نہیں۔ اگر امت متحد ہو جائے تو فلسطین اور کشمیر جیسے مسائل دنوں میں حل ہوسکتے ہیں اور دنیا بھر میں مسلمانوں کے قتل عام کو روکا جاسکتاہے۔ 

سراج الحق

مزید :

صفحہ آخر -