افغان شہریوں کیلئے ویزوں میں آسانی،تجارت بڑھانا اولین ترجیح ہے:پاکستانی سفیر

  افغان شہریوں کیلئے ویزوں میں آسانی،تجارت بڑھانا اولین ترجیح ہے:پاکستانی ...

  

 اسلام اباد(این این آئی)افغانستان میں پاکستان کے نئے سفیرمنصور احمد خان نے کہا ہے کہ ان کی ترجیحات میں افغان شہریوں کیلئے ویزوں کی مزید آسانی پیدا کرنا، دوطرفہ تجارت بڑھانا، پاکستان کے راستے افغان راہداری تجارت میں مشکلات دور کرنا،دونوں ممالک کے لوگوں کے درمیان آمدورفت کو بڑھانا اور افغان طلبہ وطالبات کو آسانی سے ویزوں میں مزید سہولیات یقینی بنانا ہے۔ اتوار کو کابل روانگی سے پہلے یہاں گفتگو کرتے ہوئے منصور خان نے کہا کہ 2010کی پاکستان، افغانستان راہداری تجارتی معاہدے میں ترمیم پر کام ہورہا ہے تاکہ افغان تاجروں کیلئے مزید آسانیاں پیدا کی جائیں اور دوطرفہ تجارت میں بھی اضافہ ہو۔ ویزوں میں آسانی کے لئے کابل میں پاکستانی سفارتخانے میں مزید کاونٹرز بنائے جا رہے ہیں۔ افغانستان کیلئے نئی ویزہ پالیسی کی وجہ سے ویزوں کیلئے رش کم ہوجائے گا کیونکہ نئی پالیسی میں طلبہ، تاجروں، مریضوں، فیملی ممبران اور عام افغان باشندوں کیلئے طویل المدتی اور ملٹی پل ویزے دئے جائینگے۔ ایک اعلی سرکاری عہدیدار نے بتایا کہ پاکستان نے افغان تاجروں کے لئے بھارت کو برآمدات کے لئے واہگہ کا راستہ بھی کھول دیا ہے، اور افغان تاجر اب اٹاری تک سامان لے جاسکتے ہیں۔ منصور خان نے بتایا کہ پاکستان نے کراچی کے علاوہ گوادر بندرگاہ بھی گزشتہ سال اکتوبر میں افغان راہداری تجارت کے لئے کھول دیا ہے جو چمن سرحد سے تجارت کے لئے کراچی سے کم فاصلے کا راستہ ہے۔ گوادر سے چمن تک سڑکوں کی حالت بھی بہت بہتر ہے اور کم رش کی وجہ سے افغان تاجر جلدی مال افغانستان منتقل اور افغانستان سے گوادر کے راست برآمد بھی کرسکتے ہیں۔ 

پاکستانی سفیر 

مزید :

صفحہ آخر -