ایران میں سابق پارلیمانی لیڈر  محمد علی بور مختار کرپشن الزام میں گرفتار

  ایران میں سابق پارلیمانی لیڈر  محمد علی بور مختار کرپشن الزام میں گرفتار

  

تہران (این این آئی)ایران میں پولیس نے ایک سینئر سیاست دان اور سابق رکن پارلیمنٹ محمد علی بور مختار کو بدعنوانی کے الزامات کے تحت تفتیش کے لیے گرفتار کیا ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق سابق رکن پارلیمنٹ محمد علی بورمختار ایرانی پارلیمنٹ میں آرٹیکل 90 کی نگران کمیٹی کے سربراہ رہ چکے ہیں۔ موجودہ حکومت نے ان پر کرپشن کا الزام عائد کیا اور انہیں اسی الزام کی چھان بین کے لیے حراست میں لیا گیا ہے۔ بورمختار کو سیکیورٹی سروسز کے ذریعہ کچھ عرصے کے لیے حراست میں لیا گیا اور وہ بدعنوانی اور قانونی خلاف ورزیوں کی تحقیقات مکمل ہونے تحت قانون نافذ کرنے والے اداروں کی تحویل میں رہیں گے۔بورمختار نے گذشتہ فروری میں ایران میں آخری پارلیمانی انتخابات میں حصہ لیا تھا لیکن گارڈین کونسل نے ان کے کاغذات نامزدگی مسترد کردئیے تھے۔ 

 بور مختار

مزید :

صفحہ اول -