14نئے ممالک میں پاکستانی مصنوعات متعارف کرانے کیلئے تجاویز ارسال

14نئے ممالک میں پاکستانی مصنوعات متعارف کرانے کیلئے تجاویز ارسال

  

کراچی /لاہور(این این آئی)پاکستان کارپٹ ایسوسی ایشن کے سینئر وائس چیئرمین ریاض احمد نے کہا ہے کہ 14نئے ممالک میں پاکستانی کارپٹ کی مصنوعات متعارف کرانے کیلئے تجاویز حکومت کو ارسال کی ہیں،کورونا وائرس کی وباء کی وجہ سے امسال ستمبر میں شیڈول کارپٹ کی عالمی نمائش منعقد نہیں ہو سکی تاہم کوشش ہے کہ ورچوئل نمائش کیلئے پیشرفت کی جائے جس کیلئے مشاورت کی جائے گی۔

،حکومت سے درخواست ہے کہ فریٹ سبسڈی دی جائے۔ ان خیالات کااظہارانہوں نے عہدہ سنبھالنے کے بعد جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر چیئر پرسن کارپٹ ٹریننگ انسٹی ٹیوٹ پرویز حنیف،سینئر مرکزی رہنماعبد اللطیف ملک،سعید خان،میجر (ر) اخترنذیر،اعجازالرحمان،اکبر ملک،دانیال حنیف،فیصل سعید خان اوردیگر بھی موجودتھے۔اجلاس میں ہاتھ سے بنے قالینوں کی صنعت کودرپیش مسائل اور ان کے حل کے حوالے تبادلہ خیال کیا گیا۔ریاض احمد نے کہا کہ ٹریڈ ڈویلپمنٹ اتھارٹی پاکستان کی جانب سے نمائش میں شرکت کے حوالے سے عائد پانچ سال کی پابندی ختم کی گئی ہے جس کا جلد باضابطہ مراسلہ بھی جاری کیا جائے گا۔ مطالبہ ہے کہ اس صنعت سے وابستہ برآمدکنندگان کی مشکلات میں کمی کیلئے اقدامات کئے جائیں۔ حکومت نے عالمی نمائشوں میں شرکت کے حوالے سے 80/20کے فارمولے پر عملدرآمدکی یقین دہانی کرائی ہے اور یہ بھی امید دلائی گئی ہے کہ نمائشوں میں شرکت کے دوران جومصنوعات فروخت نہیں ہو سکیں گی حکومت ان کی واپسی کے اخراجات برداشت کرے گی۔

۔ ریاض احمد نے کہ کہ بہت جلد وزارت تجارت اور ٹریڈڈویلپمنٹ اتھارٹی کے ذمہ داران سے بھی ملاقاتیں کر کے انہیں اپنے مسائل سے آگاہ کریں گے۔حکومت موجودہ مشکل حالات میں فریٹ سبسڈی دینے کا اعلان کرے۔

مزید :

کامرس -