سیمنٹ کی برآمدات میں 32.2فیصد کا نمایا اضافہ ریکارڈ

سیمنٹ کی برآمدات میں 32.2فیصد کا نمایا اضافہ ریکارڈ

  

 اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) ملک میں بڑی صنعتوں کی پیداواری سرگرمیوں میں بتدریج تیزی آ رہی ہے۔ وزارت خزانہ کے ذرائع کے مطابق کووڈ 19سے پیدا ہونے والی صورتحال کے باوجود جاری مالی سال کے پہلے ماہ میں مینوفیکچرنگ سرگرمیوں میں جون کے مقابلے میں 9.5 فیصد بڑھوتری ریکارڈ کی گئی۔سالانہ بنیادوں پر مینوفیکچرنگ کی سرگرمیوں میں جولائی کے دوران 5.02 فیصد اضافہ ہوا۔ آئل کمپنیز ایڈوایزری کمیٹی، وزارت صنعت وپیداوار اور صوبائی بیوروز برائے شماریات سے بالترتیب 11،36 اور 65 اشیا بارے حاصل کردہ ڈیٹا کے مطابق جولائی 2020ء  میں ان اشیا کی بڑھوتری میں بالترتیب 1، 2.25 اور 1.77 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔جولائی تا اگست ملک میں سیمنٹ کی کھپت میں 21.78 فیصد اضافہ ہوا۔ اس عرصہ میں 8.258 میٹرک ٹن سیمنٹ کی کھپت ریکارڈ کی گئی۔ گزشتہ مالی سال کی اسی مدت میں 6.863 میٹرک ٹن سیمنٹ کی کھپت ریکارڈ کی گئی تھی۔سیمنٹ کی اندرون ملک کھپت میں 19.53 اور برآمدات میں 32.2 فیصد کا نمایاں اضافہ دیکھنے میں آیا۔ بڑی صنعتوں کی پیداوار (ایل ایس ایم) کے 15 میں سے 12 بڑے شعبوں میں جولائی کے دوران 9.3 فیصد کی بڑھوتری ہوئی ہے۔جاری مالی سال کے پہلے مہینہ میں کوئلہ اورپیٹرولیم مصنوعات کی پیداوار میں 18.3 فیصد کا نمایاں اضافہ ہوا۔ گزشتہ مالی سال کے آخری چھ مہینوں میں کوئلہ اور پیٹرولیم مصنوعات کی پیداوار میں مسلسل کمی کا رحجان دیکھنے میں آیا تھا۔وزارت خزانہ کے مطابق سالانہ بنیادوں پر مشروبات، تمباکو، فارماسوٹیکل، غیر دھاتی معدنیات اور پیپر اینڈ بورڈ کی پیداوار میں بھی بتدریج بہتری آ رہی ہے۔اسی طرح آٹو موبائل کے شعبہ میں بھی بہتری آ رہی ہے۔ 

اگست 2020ء  میں کاروں کی فروخت میں 8.3 فیصد اور بسوں وٹرکوں کی فروخت میں بالترتیب 5 اور1.1 فیصد کا اضافہ ہوا ہے۔

مزید :

کامرس -