مقدمے، گرفتاریاں،حکومت تحریک شروع ہونے سے پہلے ہی بوکھلاگئی، خواجہ رضوان 

مقدمے، گرفتاریاں،حکومت تحریک شروع ہونے سے پہلے ہی بوکھلاگئی، خواجہ رضوان 

  

 ملتان (سٹی رپورٹر) مہنگائی نے تمام سابقہ ریکارڈ توڑ ڈالے ہیں ایک جانب اشیائے ضروریہ اورانسانی جان بچانے کی ادویات کی قیمتوں میں انتہائی وحشیانہ اضافہ تو دوسری جانب روزگار کے مواقع تیزی سے کم ہورہے ہیں نوجوان طبقہ بے روزگاری کی وجہ سے بے(بقیہ نمبر5صفحہ6پر)

 راہ روی کا شکار ہو رہا ہے ایسے حالات تو کبھی نہ دیکھے تھے۔ تبدیلی سرکار نے حالات کا سنجیدگی سے نوٹس نہ لیا تو جنوبی پنجاب کا نوجوان طبقہ جاگ اٹھے گا  اور حکمران جماعت کے تابوت میں آخری کیل پی وائی او کا نوجوان لگائے گا اور پی ڈی ایم کے تحت چلنے والی حکومت مخالف تحریک میں پی وائی او اپنے قائد چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا بازو ثابت ہو گی اور 30 نومبر کو ملتان میں تاریخ ساز جلسہ کے بعد وزیراعظم عمران خان ہمیشہ کیلئے گو ہو جائے گا اور ایک ہی نعرہ گونجے گا وزیراعظم بلاول بھٹو زرداری ان خیالات کا اظہار پی وائی او یو سی 79 کی تنظیم سازی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے پیپلزپارٹی جنوبی پنجاب خواجہ رضوان عالم، صدر پی وائی او جنوبی پنجاب سید عارف شاہ، صدر پیپلزپارٹی ملتان سٹی ملک نسیم حسین لابر، جنرل سیکرٹری پیپلزپارٹی ملتان ضلع راو ساجد علی، پی وائی او جنوبی پنجاب کے نائب صدر خرم خان لاشاری، خواجہ عمران، محمد علی نومی بھٹہ، ملک ندیم اختر، صدر عامر جٹ، رانا عابد، سیف بھٹی، داود چاون، حیدر چوہان، داود گجر، فہد ملک، ملک افتخار علی، ملک رمضان کمبوہ، مہر کاشف ہانسلہ، احمد جٹ، چوہدری اشتیاق گجر، فرحان عرف کاکو شاہ، رضوان سیال، اسامہ، مجتبے، شیخ عمران، بلال، انس ملک، سید رضوان شاہ، ملک چندا، نجف شاہ و دیگر نے کیا تقریب میں خرم خان لاشاری کو پی وائی او جنوبی پنجاب کے نائب صدر بننے کا، عامر جٹ کو یوسی 79 قاسم بیلہ کا صدر بننے کا فہد ملک کو یونین کونسل 2 کا صدر بننے کا نوٹیفیکیشن بھی دیا گیا تقریب میں سینکڑوں کی تعداد میں پی وائی او کے جوانوں نے شرکت کی مقررین نے مزید کہا کہ تبدیلی سرکار نے الیکشن سے پہلے اقتدار کے 100 دنوں میں ایک کروڑ نوکریاں پچاس لاکھ گھر اور دودھ کی نہریں بہا دینے کے سہانے خواب عوام کو دکھائے لیکن دوسال سے زائد عرصہ بیت چکا کوئی ایک عمل ایسا نہیں نظر آ رہا جس سے عوام کو ریلیف ملے بلکہ مہنگائی ک جن بے قابو ہو چکا ہے بے روزگاری بڑھ چکی ہے کرپشن، لاقانونیت اور رشوت کلچر میں اضافہ ہوچکا ہے۔ ایسا لگتا ہے حکومت نام کی کوئی رٹ کہیں موجود نہیں۔ انتظامیہ و اراکین پارلیمان کی کارکردگی صفر ہے۔ خوشآمدی پن اور اقرباء پروری کی بدولت عوام کے مسائل میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ حکومت ہوش کے ناخن لیتی لیکن دو سال کے عرصہ کے بعد اب عوام س حکومت کو مزید برداشت نہیں کر سکتے اس لئے چیئرمین پاکستان پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے عوام کا درد سمجھتے ہوئے اے پی سی بلائی اور تمام اپوزیشن جماعتوں کو پی ڈی ایم کے پلیٹ فارم پر اکٹھا کیا کیونکہ حکومت نے عوام کو بنیادی ضروریاتِ زندگی سستی قیمتوں پر فراہم نہیں کی اور حکومتی و انتظامی رٹ کے قیام کو یقینی نہیں بنایا  عوام بھوک و افلاس سے مر رہی ہے اس لئے پی ڈی ایم کے تحت حکومت مخالف تحریک کا آغاز کیا جا رہا ہے تاکہ ملک دشمن و عوام دشمن تبدیلی سرکار سے عوام کی جان چھڑائی جا سکے اب وہ وقت دور نہیں جب عوام کا خون نچوڑنے والا وزیراعظم عمران خان ایوان اقتدار کو ہمیشہ کیلئے چھوڑ کر بھاگ جائے گا۔پاکستان پیپلز پارٹی فیڈرل کونسل کے رکن و چیف کووا ڈینیٹر جنوبی پنجاب عبدلقادرشاھین اور سنئیر نائب صدر جنوبی پنجاب خواجہ رضوان عالم نے سلیکٹڈ وزیراعظم عمران نیازی کئے بیان پر سخت ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ٹائیگر فورس کو ملک بھر میں مہنگائی کنٹرول کرنے کیلئے میدان میں اتارنے کا مقصد قوم کو خانہ جنگی کی طرف دھکیلنے کے مترادف ہے۔ انہوں نے کہا کہ قوم جاننا چاہتی ہے جب ملک کے اندر آٹا چینی پیٹرولیم مصنوعات سمیت کورونا ڈینگی وبا ء کے علاوہ مختلف سنگین بحرانی کیفیت عروج پر تھی تو اس وقت یہ ٹائیگر فورس زیر زمین کیوں تھی وزیراعظم کو اس وقت یہ خیال کیوں نہیں آیا آج جب پوری اپوزیشن مہنگائی کیخلاف متحد ہو کر قوم کو حکمرانوں کا اصل چہرہ دیکھا رہی ہے تو اپوزیشن کی تحریک سے خوفزداہ حکومتی اتحاد اپوزیشن قیادت اور سیاسی رہنماوں کے خلاف من گھڑت بدنیتی پر مبنی اوچھے ہتھکنڈوں کے ذریعے ے مقدمات جعلی ریفرنسیز میں ناکامی کے بعد اب ٹائیگر فورس کے زرئعیے قوم کو خانہ جنگی کی طرف لے جانا چاہتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ قوم جانتی ہے کہ ٹائیگر فورس پی ٹی آئی کا سیاسی ونگ ہے جسے غیر آئینی طریقے سے قوم اور ریاستی اداروں پر مسلط کرکے قومی خزانے سے نوازنے سمیت بینکوں سے قرضے دلاکر انہیں اپنے زاتی اور مزموم مقاصد کے حصول کیلئے استعمال کرنا چاہتی ہے جسے متحدہ اپوزیشن کسی صورت کامیاب نہیں ہونے دئے گی۔پارٹی رہنماوں کا کہنا تھا کہ حکومت پی ڈی ایم کی تحریک شروع ہونے سے قبل ہی بوکھلا گئی ہے۔ اب عوام نہیں بلکہ سلیکٹڈ حکمرانوں کے گھبرانے کا وقت شروع ہوچکا ہے۔انتقامی بنیادوں پر حکمران قومی قیادت کو نیب گردی کے زرئعے ہراساں کرکے زیادہ دیر تک اقتدار پر قابض نہیں رہ سکتے۔نااہل حکمرانوں کے طرز حکمرانی سے ملک سیاسی معاشی اخلاقی خارجی و داخلی سطح پر مکمل طور پر ناکام ہوچکا ہے حکومت چلانا سیاسی مسافروں کے ٹولہ کے بس کی بات نہیں بلکہ انکی رخصتی کا وقت آن پہنچا ہے۔

مہنگائی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -