نیب دفتر ہنگامہ آرائی، رانا ثنا اللہ اور کیپٹن (ر)صفدر کی عبوری ضمانت میں توسیع

نیب دفتر ہنگامہ آرائی، رانا ثنا اللہ اور کیپٹن (ر)صفدر کی عبوری ضمانت میں ...
نیب دفتر ہنگامہ آرائی، رانا ثنا اللہ اور کیپٹن (ر)صفدر کی عبوری ضمانت میں توسیع

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)نیب دفتر لاہور میں ہنگامے آرائی کے کیس میں انسداد دہشتگردی عدالت نے مسلم لیگ نون کے رہنما رانا ثنا اللہ،کیپٹن(ر) صفدر اور دیگر کی عبوری ضمانت میں 15 اکتوبر تک توسیع کر دی۔

انسداد دہشت گردی عدالت کے جج ارشد حسین بھٹہ نے نون لیگی رہنماو¿ں کی درخواست ضمانتوں کی سماعت کی ،رانا ثنا اللہ عدالت میں حاضری کےلئے پیش ہوئے جبکہ کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی میڈیکل بنیاد پرحاضری معافی کی درخواست جمع کرائی گئی جسے عدالت نے قبول کرلیا۔

لیگی رہنماو¿ں کی جانب سے ایڈووکیٹ ہارون بھٹہ، فرہاد علی شاہ عدالت میں پیش ہوئے ، تفتیشی افسر کی جانب سے عدالت میں رپورٹ پیش کی گئی جس میں بتایا گیا کہ محمد صفدر، دیگر پر ہنگامہ اور اشتعال انگیزی کرانے کا الزام ہے۔

تفتیشی افسر نے عدالت کو بتایا کہ ملزم صفدر اور دیگر لیگی رہنما مریم نواز کی پیشی پر پولیس پر پتھراؤ کرانے اور کارکنان کی ہنگامہ آرائی میں ملوث ہیں۔نون لیگ کی جانب سے ایڈووکیٹ فرہاد علی شاہ نے عدالت میں کہا کہ چوہنگ پولیس نے نیب آفس پر حملے اور ہنگامہ آرائی کے الزام میں بے بنیاد مقدمہ درج کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم پر بے بنیاد انسداد دہشت گردی کا پرچہ درج کر دیا ہے، ہماری عدالت سے استدعا ہے کہ درخواست ضمانتیں منظور کرنے کا حکم دے۔اس موقع پر عدالت نے لیگی رہنماؤں کی عبوری ضمانتوں میں 15 اکتوبر تک توسیع کر دی۔

مزید :

قومی -علاقائی -پنجاب -لاہور -