یہ رُکے رُکے سے آ  نسو ، یہ دبی دبی سی آہیں​| مجروح سلطانپوری |

یہ رُکے رُکے سے آ  نسو ، یہ دبی دبی سی آہیں​| مجروح سلطانپوری |
یہ رُکے رُکے سے آ  نسو ، یہ دبی دبی سی آہیں​| مجروح سلطانپوری |

  

یہ رُکے رُکے سے آ  نسو  ، یہ دبی دبی سی آہیں​

یونہی کب تلک خدایا، غم زندگی نباہیں​

کہیں ظلمتوں میں گھِر کر، ہے تلاشِ دست رہبر​

کہیں جگمگا اُٹھی ہیں مرے نقشِ پا سے راہیں​

ترے خانماں خرابوں کا چمن کوئی نہ صحرا​

یہ جہاں بھی بیٹھ جائیں وہیں ان کی بارگاہیں​

کبھی جادۂ طلب سے جو پھرا ہوں دل شکستہ​

تری آرزو نے ہنس کر وہیں ڈال دی ہیں بانہیں​

مرے عہد میں نہیں ہے، یہ نشانِ سر بلندی​

یہ رنگے ہوئے عمامے  یہ جھکی جھکی کُلاہیں​

شاعر: مجروح سلطان پوری​

(شعری مجموعہ:غزل؛سالِ اشاعت،1970)

Yeh    Rukay   Rukay   Say   Aansu  ,   Yeh    Dabi   Dabi   Si   Aahen

Yun   Hi   Kab   Talak   Khudaaya   Gham-e-Zindagi   Nibaahen

Kahen    Zulmaton   Men   Ghir   Kar   Hay   Talaash-e-Dast   Rehbar

Kahen   Jagmaga   Uthi   Hen   Miray   Naqsh-e-Paa   Say   Raahen

Tiray    Khaanuma   Kharaabon   Ka   Chaman   Koi   Na   Sehra

Yeh   Jahan   Bhi    Beth   Jaaen   Wahen   In   Ki   Baargaahen

Kabhi   Jaada-e-Talab   Say   Jo   Phira    Hun   Dil-e-Shakista

Tiri   Aarzu   Nay   Hans   Kar   Wahen   Daal   Di   Hen   Baahen

Miray   Ehd   Men   Nahen    Hay   Yeh   Nishaan-e-Sarbulandi

Yeh   Rangay    Huay   Amaamay   Yeh   Jhuki   Jhuki   Kalaahen 

Poet: Majrooh    Sultanpuri

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -غمگین شاعری -