میری آ نکھوں کی روشنی| محبوب خزاں |

میری آ نکھوں کی روشنی| محبوب خزاں |
میری آ نکھوں کی روشنی| محبوب خزاں |

  

میری آ نکھوں کی روشنی

میری آ نکھوں کی روشنی

دیکھ ، دنیا کچھ اور ہے

شبِ ہجراں کے چاند میں

ہم نے دیکھا کچھ اور ہے

چاہتے ہم کچھ اور ہیں

اورہونا کچھ اور ہے

میری آ نکھوں کی روشنی

تو مرے پاس آئے گی

شاعر: محبوب خزاں

(شعری مجموعہ:اکیلی بستیاں؛سالِ اشاعت،1979)

Meri   Aankhon   Ki   Raoshni

Meri   Aankhon   Ki   Raoshni

Daikh  ,   Dunya   Kuchh   Aor   Hay

Shab-e-Hijraan   K   Chaand   Men

Ham   Nay   Dekha   Kuchh   Aor   Hay

Chaahtay   Ham   Kuchh   Aor   Hen

Aor   Hona   Kuchh   Aor   Hay

Meri     Aankhon   Ki   Raoshni

Tu   Miray   Paas   Aaey   Gi

Poet: Mahboob   Khizan

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -غمگین شاعری -