محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر کی مختلف شہروں میں غائبانہ نمازجنازہ،تعزیتی تقریبات، خدمات کو خراج تحسین 

محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر کی مختلف شہروں میں غائبانہ نمازجنازہ،تعزیتی ...

  

وہاڑی،لودھراں،کوٹ ادو،لیاقت پور،خان پور بگا شیر،خان گڑھ،میاں چنوں،ٹھٹھہ صادق آباد، ڈیرہ غازیخان، خان پور،محسن وال،ڈاہرانوالہ،احمد پور سیال،سکندر آباد، کچا کھوہ (بیورو رپورٹ، نمائندہ پاکستان، نامہ نگار،تحصیل رپورٹر،نمائندہ خصوصی) خان پور بار ایسوسی ایشن کے زیر اہتمام محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر خان مرحوم کی غائبانہ نمازجنازہ ادا کی گئی جس میں وکلا ء سمیت شہریوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔وکلاء اور شہری ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی وفات پر انتہائی مخموم تھے اور افسردہ تھے کہ ارباب اقتدار نے قومی ھیرو کی قدر نہیں کی انڈیا نے اپنے ایٹمی سائنسدان کو منصب صدارت پر فائز کیا اور ہم نے قومی ھیرو کی حد درجہ بے قدری کی۔صدر بار حافظ میاں سمیع اللہ ایڈووکیٹ اورجنرل سیکرٹری بارمحمد معین خان گھنیاں ایڈووکیٹ نے کہا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان ملک وملت بلکہ عالم اسلام کے عظیم محسن تھے جنہوں نے وطن کی محبت میں اپنا سب کچھ قربان کر دیا غائبانہ نماز جنازہ صدر بار حافظ  میاں سمیع اللہ ایڈووکیٹ نے پڑھائی۔غائبانہ نمازجنازہ میں الیاس خان لولائی ایڈووکیٹ، جام ناصرفیاض ایڈووکیٹ، میاں رفیق احمد ایڈووکیٹ، ریاض احمد چوہدری ایڈووکیٹ، نعمان نوازایڈوکیٹ، جام عبدالمجید ایڈووکیٹ، خورشید خان چانڈیہ ایڈووکیٹ سمیت دیگر معزز وکلاء نے شرکت کی۔میاں چنوں تحصیل کچہری میں محسن پاکستان ایٹم بم کے خالق ڈاکٹر عبدالقدیرخان کی غائبانہ نماز جنازہ ادا کردی گئی،نماز جنازہ میں ایڈیشنل سیشن ججز راؤ فرقان احمد، ملک نعیم شوکت، سول ججز محمد مصطفی، ریحان سبطین سمیت وکلاء اور عدالتی ملازمین کی کثیر تعداد نے شرکت کی غائبانہ نماز کا اہتمام بار ایسوسی ایشن میاں چنوں کے صدر مہر ریاض ہمجانہ ایڈووکیٹ اور جنرل سیکرٹری رانا فخر امام ایڈووکیٹ نے کیا نماز جنازہ حافظ عبدالماجد نے پڑھائی۔مسلم لیگ(ن)کے ایم این اے و صدر گلف ریجن چوہدری احسان الحق باجوہ نے محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر خاں کی وفات پر گہرے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ان کی وفات ایک قومی سانحہ  ہے ان کا خلا کبھی پر نہیں ہو سکے گا.ڈاکٹر عبدالقدیر خاں نے ملک کا دفاع نا قابل تسخیر بنا کر دشمن ملک بھارت کے عزائم کو خاک میں ملا دیا.ڈاکٹر عبدالقدیر خاں کی وفات پر ہر پاکستانی غم میں مبتلا ہے.بلا شبہ وہ ایک عظیم قومی ہیرو کا درجہ رکھتے ہیں لیکن افسوس کہ انہوں نے اپنے آخری ایام انتہائی دکھ میں گزارے.ان کے جنازے میں وزیر اعظم سمیت تمام قومی قیادت کو شریک ہونا چاہیے تھا.ڈاکٹر عبدالقدیر خاں کی خدمات پر پوری قوم ان کی احسان مند ہے۔محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی وفات پر احمد پور سیال کے مختلف سیاسی رہنماؤں نے”پاکستان“ سے گفتگو کرتے ہوئے مختلف تعزیتی پیغامات دئیے۔صوبائی پارلیمانی سیکرٹری برائے لائیو سٹاک رانا شہباز احمد خاں نے ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی رحلت کو ایک بہت بڑا قومی سانحہ قرار دیتے ہوئے اسے ملک وقوم کے لیے ایک بہت بڑا نقصان قرار دیا ہے۔امیدوار برائے صوبائی اسمبلی خان امیر عباس خان سیال نے کہا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان پاکستان کا سرمایہ تھے یہی وجہ ہے کہ انہوں نے وطن عزیز کو ایٹمی طاقت بنا کر اس کا دفاع ناقابل تسخیر کردیا۔امیدوار برائے قومی وصوبائی اسمبلی الحاج خان نذر عباس خان سیال نے کہا کہ ایٹمی میدان میں ڈاکٹر عبدالقدیر خان پورے ملک کے لیے مایہ ناز ثابت ہوئے ہیں۔اس سلسلہ میں ان کی گراں قدر خدمات کو قوم ہمیشہ یاد رکھے گی۔ان کی دنیا سے رخصتی کے بعد نہ پر ہونے والا خلا پیدا ہوگیا ہے۔پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مقامی رہنما مہر ذوالفقار علی ہرل نے کہا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر نے محمد نواز شریف کی وزارت عظمیٰ کے دوران چاغی کے مقام پر ایٹمی دھماکے کرکے پوری قوم کے سر فخر سے بلند کردئیے۔ انہی کے کامیاب تجربے کا نتیجہ ہے کہ آج کوئی پاکستان کی طرف میلی آنکھ سے دیکھنے کی جرات بھی نہیں کرسکتا۔پاکستان مسلم لیگ (ن) کو ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی وفات کا گہرا صدمہ ہوا ہے۔اللہ تعالیٰ مرحوم کے درجات بلند کرے اور انہیں کروٹ کروٹ جنت نصیب کرے۔ سابق وزیراعظم و قائد حزب اختلاف سینیٹ سید یوسف رضا گیلانی پیپلز پارٹی کے ضلعی رہنما رانا صفدر عباس نون کی رہائش گاہ پر تشریف لائے اور انکے والد کی وفات پر تعزیت اور فاتحہ خوانی کی۔سید یوسف رضا گیلانی نے ڈاکٹر عبدالقدیر خان کے ایصال ثواب کیلئے بھی فاتحہ خوانی کی۔ اس موقع پر نیشنل پریس کلب شجاع آباد کے صحافیوں سے گفتگو میں کہا کہ پاکستان کے ایٹمی سائنسدان اور ایٹمی پروگرام کے بانی ڈاکٹر عبدالقدیر خان کے انتقال پر شدید دکھ ہے۔ ڈاکٹر عبدالقدیر محسنِ پاکستان ہیں۔ ایٹمی پروگرام دیکر انہوں نے قوم پر جو احسان کیا وہ ہمیشہ یاد رکھا جائیگا۔ ڈاکٹر عبدالقدیر کی وفات بحثیتِ قوم بلاشبہ پاکستان کیلئے ناقابلِ تلافی نقصان ہے۔ اللہ تعالی مرحوم کے درجات بلند فرمائے اور لواحقین کو صبرِ جمیل عطاکرے۔ بعد ازاں سید یوسف رضا گیلانی ڈاکٹر بلال کی رہائش گاہ پر گئے جہاں انکی والدہ کی وفات پر تعزیت اور فاتحہ خوانی کی۔ڈاکٹرعبدالقدیر خان نہ صرف پاکستان بلکہ پوری امت مسلمہ کے محسن تھے. انہوں نے پوری زندگی امت مسلمہ کی کفر سے حفاظت کو بہتر سے بہترین بنانے میں وقف کی. اللہ تعالی ان کو اجر عظیم عطا کرے اور ان کو جنت کے بہترین باغوں کا مکین بنائے ان خیالات کا اظہار آل پاکستان پرائیویٹ سکولز ایسوسی ایشن کے مرکزی چیئرمین ضیاالسلام زاہد قریشی نے پرائیویٹ سکولز کے طلبہ کی جانب سے ڈاکٹر عبدالقدیر خان کے غائبانہ نماز جنازہ کی ادائیگی کے بعد طلبہ سے خطاب کرتے ہویے کیا. ان کا کہنا تھا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر پاکستان کے ایٹمی پروگرام کے بانی تھے انہون نے پاکستان کو پہلی اسلامی اٹامک پاور سلطنت بنانے میں کلیدی کردار ادا کیا تھا. انہوں نے پاکستان کے ازلی دشمن بھارت کو منہ تور جواب دینے کیلیے ایٹم بنا کر پوری قوم کو محفوظ بنایا اور پوری امت مسلمہ کا سر فخر بلندکردیا تھا، تفصیلات کے مطابق آل پاکستان پرائیویٹ سکولز ایسو سی ایشن کے مرکزی چیئرمین ضیا السلام زاہد قریشی کی اپیل پر پورے ملک کی طرح ڈیرہ غازی خان میں بھی ایپسا کے ممبران سکولز میں پاکستان کے ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبدالقدیر خان کا غائبانہ نماز جنازہ ادا کی گیا اور ان کی روح کی ایصال ثواب اور بلندی درجات کیلئے اجتماعی دعائے مغفرت کی گئی۔کچاکھوہ پریس کلب کے صدر چوہدری محمد رشید کی سربراہی میں ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی وفات پر دعائیہ تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میں انکے درجات کی بلندی کے لیے دعا کرائی گئی اس موقع پر صدر چوہدری محمد رشید نے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈاکٹر عبد القدیر خان امت مسلمہ اور بالخصوص پاکستان کے لئے انتہائی افسوسناک اور عظیم سانحہ ہے۔انہوں نے مسلمان ممالک کو مضبوط کرنے میں اہم کردار ادا کیا اور پاکستان کو ایٹمی طاقت سے نواز کر مسلم دنیا کو مضبوط کیا۔ پاکستان کے لئے جو خدمات سر انجام دیں انہی کی بدولت آج ہم آزادی کی فضا میں سانس لے رہے ہیں۔ ڈاکٹر عبدالقدیر خان جیسے مسلمان سائنسدان صدیوں میں پیدا ہوتے ہیں۔ یہ ان کی پاکستان سے محبت تھی کہ وہ عیش و عشرت کی زندگی چھوڑ کر پاکستان آئے اور پاکستان کے لئے وہ خدمات سر انجام دیں جس کاپاکستان اور عوام  تا قیامت مقروض رہیں گے۔وطن عزیز کی آزاد فضاوں میں سانس لینے والے تمام پاکستانی آپ کے شکر گزار ہیں۔ ڈاکٹر عبدالقدیر خان، ہم آپ کو کبھی نہیں بھول پائیں گے۔ اللہ پاک آپ کو جنت الفردوس کے بلند ترین درجات سے نوازے۔محسن پاکستان ممتاز ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبدالقدیر خان مرحوم کی غائبانہ نمازِجنازہ شہدا پاکستان ویلفیر سوسائٹی ٹھٹھہ صادق آباد کے زیر اہتمام گورنمنٹ مڈل سکول ٹھٹھہ صادق آباد میں ادا کی گئی، نمازِ جنازہ مسعود احمد نظامی نے پڑھائی، غائبانہ نماز جنازہ میں سیاسی سماجی عوامی شخصیات صحافیوں تاجروں نے شرکت کی، اس موقع پر ڈاکٹر عبدالقدیر خان مرحوم کے لیے فاتحہ خوانی کرتے ہوئے دعائے مغفرت کی،اس موقع پر ڈاکٹر عبدالقدیر خان کو شاندار الفاظ میں خراج تحسین پیش کیا گیا،مسعود احمد نظامی، فریاد اختر چوہدری، چوہدری ساجد علی نے کہاکہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان مرحوم ہمارے حقیقی ہیرو قیمتی اثاثہ تھے، ملک وقوم کے لیے ان کی پیش بہا خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا، اس موقع پر رانا عبدالروف، رانا شبیر نمبردار، الیاس جوئیہ، زاہد شہزاد، عابد حسین مغل، فوجی نصیر احمد، امین وینس، عمران سنگھا، سمیت دیگر شخصیات بھی موجود تھیں۔میاں چنوں جما عت اہلسنت سٹی میاں چنوں کے زیر اہتمام شاہی مرکزی جامع مسجد نشتر روڈ میں ڈاکٹر عبد القدیر خان کے ایصال ثواب کے لئے دعا ئیہ تقریب زیر صدارت الحاج محمد تاج رفیق مغل صدر جماعت اہلسنت سٹی میاں چنوں منعقد ہوئی جس میں مفتی رفیق احمد شاہ جمالی الحاج فاروق احمد تسنیم مولانا محمد شفیع سعیدی قاری غلام قادرقادری محمد طارق حسین میاں عثما ن الخیری کے علاوہ کیثر تعداد میں کارکنا ن نے شر کت کی دعائیہ سے خطاب کرتے ہوئے الحاج فاروق احمد تسنیم نے ڈاکٹر عبدا لقد یر خاں کی ر حلت کو پاکستان کا قومی سا نح قرار دیا جس کی تلافی آنے والے کئی عشرو ں میں بھی نہ ہو سکے گی ڈاکٹر عبد القد یر خاں کا پاکستانی قوم پر اس قدر احسان تھا کے انہوں نے ملکی د فاع کو نا قابل تسخیر بنا دیا انہوں نے ڈاکٹر عبدالقدیر خاں نے پاکستان کے دفاع کو مضبوط بنانے میں کلیدی کردار ادا کیا اور گراں قدر خدمات سر انجام دی قاری غلام قادر قادری نے کہا کہ قوم انہیں ہمیشہ یاد رکھے گی ملک اپنے قیمتی اثاثے سے محروم ہوگیا الحاج محمد تاج رفیق مغل نے کہا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر خاں چاہتے تھے کہ ٹیکنا لوجی میں پا کستان مسلم دنیا کو لیڈ کرے اور دنیا میں بڑی ایٹمی قوت تسلیم کیا جائے آخر میں مرحوم مغفور کے لئے لئے خصو صی دعائے منغفر ت کی گئی کے اللہ تعالی مر حو م کے در جات بلند کرے۔تحصیل اینٹی ٹی بی ایسوسی ایشن شجاع آباد میں محسن پاکستان اٹیمی سائنسدان ڈاکٹر عبدالقدیر مرحوم کے روح کے ایصال ثواب کے لیے فاتحہ خوانی کا اہمتام کیاگیا جنرل سیکرٹری تحصیل اینٹی ٹی بی ایسوسی ایشن منصور خان چاکرانی نے دعا کرائی جس میں مرحوم کی مغفرت اور درجات کی بلندی کے لیے خصوصی دعاکی گئی اس موقع پر محمدعلی خان حمزائی سول ویلفیر آفیسر نبی شیرچوہدری را سلیم شاد و دیگر بھی موجود تھے۔محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی رحلت پر سول سوسائٹی فورم خان گڑھ کے زیراہتمام انکی مغفرت کیلئے دعا کی گئی اور ان کی ملک کیلئے بیپناہ خدمات پر خراج تحسین پیش کیا گیا اس موقع پر مقررین نے کہا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان مرحوم محب وطن تھے انہوں نے ملک کو ایٹمی طاقت بنا کر ناقابل تسخیر بنا دیا اور کہا کہ ان کا نام تاریخ میں سنہری حروف میں لکھا جائے گا اس موقع پر نوابزادہ محمدشہباز خان ایڈووکیٹ، محمدیعقوب خان لودھی، مہرراشدنصیرسیال، قاضی محمداعظم، راناسہیل فرزند، ملک ساجد کمبوہ، ملک محمدنقی ایڈووکیٹ، کریم بخش کھچی، محمدخالدنائچ سمیت عہدیدران و ممبران موجود تھے  میراحمدمستانہ سہروردی کے مطابق۔۔۔ مسلم لیگ ضیا کے سربراہ سابق وفاقی وزیر  اعجاز الحق نے ایٹمی سائنسدان محسن پاکستان ڈاکڑ عبدالقدیر خان کی وفات کو ایک ناقابل تلافی نقصان قرار دیا ہے۔لندن سے معروف صحافی و کالم نگار میاں میراحمد مستانہ سہروردی سے فون پر گفتگو کرتے ہوئے محمد اعجاز الحق نے کہا کہ سابق صدر پاکستان جنرل ضیا الحق شہید نے ڈاکڑ عبدالقدیر کو ایٹمی پاکستان بنانے میں مکمل سپورٹ کیا۔اور جب ایٹم بم بن گیا تو ڈاکڑ عبدالقدیر نے جب یہ خوشخبری صدر پاکستان جنرل ضیا الحق کو سنائی تو انہوں نے ڈاکڑ قدیر کو نہ صرف شاباش دی بلکہ انکا ماتھا چوما۔اور کہا کہ اب پاکستان ناقابل تسخیر بن گیا ہے اگر ہندوستان نے کبھی جارحیت کی کوشش کی تو منہ توڑ جواب دیں گے۔محمد اعجاز الحق نے آبدیدہ ہوتے ہوئے بتایا کہ ڈاکڑ اے کیو خان کی وفات سے وہ خلا پڑا ہے جو شاید کبھی پر نہ ہوسکے۔انہوں نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ انہیں آخری ایام اور تدفین پر انہیں وہ اعزاز نہیں دیاگیا جس کے وہ مستحق تھیمحسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی وفات سے پاکستان یتیم ہو گیا محسن پاکستان کی وفات پر ہر آنکھ اشکبار خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا غلام یاسین خان بلوچ قاری محمد اسماعیل نقشبندی۔ڈاکٹر عبدالقدیر خان کے رحلت تمام امت مسلمہ کے لیے سانحہ سے کم نہیں محسن پاکستان کی ایٹمی قوت بنانے کے لئے خدمات کو کبھی فراموش نہیں کی جاسکیں  گی طاہر خان چانڈیہ تفصیل کے مطابق خانپور بگا شیر میں بلوچ ویلفیئر آرگنائزیشن آف پاکستان رجسٹرڈکی طرف سے محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی غائبانہ نماز جنازہ ادا کی گئی جس کے بعد بلوچ ویلفیئر آرگنائزیشن پاکستان کے عہدیدران نے مشترکہ خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان ملک و قوم کا اثاثہ تھے ان کی وفات پر ہر آنکھ اشکبار ہے تاقیامت ان کی خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا قوم آج عظیم مسلم سائنسدان اور قومی ہیرو سے محروم ہوگئی محسن پاکستان کا انتقال ملک اور قوم کے لئے ناقابل تلافی نقصان ہے جسے کبھی پورا نہیں کیا جا سکتا ملک کیلئے جوہری پروگرام میں اہم کردار ادا کیا ہے انہوں نے ساری زندگی وطن عزیز کے لیے وقف کیے رکھی  پریس  کلب (رجسٹرڈ) لیاقت پور اور اور سول سوسائٹی کے زیر اہتمام محسن پاکستان ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبدالقدیر خان مرحوم کی غائبانہ نماز جنازہ آج دن 2 بجے میونسپل کمیٹی کے لان میں ادا کی جائے گیمحسن پاکستان ڈاکٹر قدیر خان کا غائبانہ نماز جنازہ ادا کر دیا گیا،نماز جنازہ کوٹ ادو بار کی جانب سے ادا کیا گیا،غائبانہ نماز جنازہ میں تمام ججز بار اور صدر بار ارشد صدیقی سمیت تمام بار ممبران نے شرکت کی،اس حوالے سے صدر بار محمد ارشد صدیقی کا کہنا تھا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان ہمارے محسن تھے انہوں نے پاکستان کو عظیم مملکت بنایاہم ان کے احسان مند ہیں محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر کا امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق کی اپیل پر پورے پاکستان کی طرح لودھراں غوثیہ چوک پر غائبانہ نماز جنازہ ادا کر دیا گیا۔نماز جنازہ کے بعد شرکا سے خطاب کرتے ہوئے امیرجماعت اسلامی ضلع لودھراں ڈاکٹرطاہراحمد چوہدری نے ایٹمی سائنسدان اور محسن پاکستان ڈاکٹر عبد القدیر خان کے انتقال پر اظہار تعزیت کرتے ہوئے دعا کی کہ اللہ تعالی مرحوم کو اپنے جوار رحمت میں جگہ عطا فرمائے اور لواحقین کو صبر جمیل دے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ڈاکٹر عبد القدیر خان کی بے مثال اور لا زوال خدمات کو کبھی فراموش نہیں کیا جاسکتا۔ ان کی رحلت سے پوری قوم صدمے میں ہے۔ پاکستان کے ایٹمی پروگرام کے معمار کچھ عرصہ سے علیل تھے۔ انہوں نے کہا کہ بیرون ملک تعلیم حاصل کرکے جس جذبے سے ڈاکٹرصاحب نے پاکستان واپس آکر ملک و قوم کی خدمت کی ہے اس پر پاکستان کے 22کروڑ عوام انہیں خراج تحسین پیش کرتے ہیں صدر جامع مسجد مبارک اہلحدیث چوہدری عبدالمنان نے کہا ہے کہ عالم اسلام کی واحد ایٹمی طاقت کے بانی محسن پاکستان ڈاکٹر عبد القدیر  کی غائبانہ نماز جنازہ آج 12 اکتوبر بروز منگل بعد نماز عصر جامع مسجد مبارک اہلحدیث میں ادا کی جائیگی غائبانہ نماز جنازہ معروف عالم دین قاری عبداللہ طیب پڑھائیں گے انہوں نے شہریوں سے شرکت کی اپیل کی ہے

مزید :

صفحہ اول -