بھارت میں بی جے پی سرکار کی اسلام و پاکستان دشمنی انتہا کو پہنچ چکی،حافظ خالد ولید

بھارت میں بی جے پی سرکار کی اسلام و پاکستان دشمنی انتہا کو پہنچ چکی،حافظ ...

لاہور (نمائندہ خصوصی ) تحریک آزادی جموں کشمیر کے جنرل سیکرٹری حافظ خالد ولید نے کہا ہے کہ بھارت میں بی جے پی سرکار کی اسلام و پاکستان دشمنی انتہا کو پہنچ چکی۔بھارت کے مسلم اکثریتی علاقوں میں گائے کی قربانی کرنے سے ہندو انتہاپسند وں کا روکنا مذہبی معاملات میں مداخلت اور آر ایس ایس کے ایجنڈے کو پروان چڑھانے کی کوشش ہے۔ کشمیریوں نے بھارتی مظالم و کرفیو کے باعث عید الاضحیٰ سادگی سے منانے کااعلان کیا ہے ۔پاکستانی قوم تحریک آزادی کشمیر میں انکے شانہ بشانہ ہے۔کشمیریوں کو عید کی خوشیوں میں شامل کیا جائے گا۔اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ بھارت میں بی جے پی کے برسراقتدار آنے کے بعد مظالم کا سلسلہ بہت زیادہ بڑھ چکا ہے تاہم مودی سرکار کی انہی پالیسیوں کی وجہ سے تحریک آزادی کشمیر عروج پر پہنچ چکی ہے۔ حریت لیڈروں کوجیلوں میں ڈالا گیاہے۔نماز جمعہ پڑھنے کی اجازت نہیں دی جاتی۔بھارتی مظالم کے باوجودتحریک آزادی تیز ہوئی ہے اوراس وقت صورتحال یہ ہے کہ مظلوم کشمیری اپنے سینوں پر گولیاں کھا کر اسلام و پاکستان سے دوستی و محبت کا ثبوت دے رہے ہیں اور ہر کشمیری پاکستان کا پرچم اٹھا ئے نظر آتا ہے۔انہوں نے کہاکہ قربانی اللہ کا حکم اور مسلمانوں پر واجب ہے لیکن مودی سرکار اسلام کے اس عظیم عمل پر پابندی لگانے کی کوششیں کر رہی ہے۔بھارت میں مسلمانوں کو گائے کی قربانی کرنے سے روکا جا رہا ہے اور انہیں دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔گائے کی قربانی سے کسی کے جذبات مجروح نہیں ہوتے۔اسلام نے قربانی کا حکم دیا ہے اور یہ سنت ابراہیمی ہے۔انہوں نے کہا کہ ضرورت اس امر کی ہے کہ کشمیریوں کو غاصب بھارت کے ظلم و تشددسے نجات دلانے کیلئے ہر شخص اپنا کردار اد ا کرے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1