پاکستان کا ایٹمی پروگرام خطے میں امن کی ضمانت ہے، مولانا محمد امجد

پاکستان کا ایٹمی پروگرام خطے میں امن کی ضمانت ہے، مولانا محمد امجد

لاہور (نمائندہ خصوصی ) جے یو آئی کے قائم مقام سیکر ٹری جنرل مولانا محمد امجد خان ،عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے مر کزی راہنما مولانا اللہ وسایا ،مولانا زاہدالراشدی،شیخ عبد الحمید گولرہوی،مولانا ضیا ء اللہ شاہ، ،قومی اسمبلی رکن مولانا گوہر علی شاہ ،شیخ الحدیث مولانا غلام صادق،مفتی شہاب الدین ،مفتی عبد اللہ شاہ ،مفتی گوہر علی،مولانا ایاز احمد ،حاجی عبد الرحمن ،حاجی کلیم اللہ،حافظ حمید اللہ اور دیگرراہنماؤں نے لاہور،لال مسجد اسلام آباد اور چار سدہ میں عظیم الشان ختم نبوت کا نفرنس سے خطاب کرتے ہوئے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے خلاف سازشیں عروج پر ہیں بھارت اسرائیل اور امریکہ مل کر وطن عزیز کے اسلامی اور ایٹمی پروگرام کو ٹارگٹ اور رول بیگ کر نے کے لیے گٹھ جوڑ کر چکے ہے لیکن پوری دنیا پر یہ بات واضح ہے کہ اسلامی احکامات پر عمل کر نا ہمارا ایمان ہے اور پاکستان کا ایٹمی پروگرام خطے میں امن کی ضمانت ہے جے یو آئی اور عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے میڈیا سیل کے مطابق مو لانا محمد امجد خان نے کہاکہ عقائد اور خصوصا عقیدہ ختم نبوت کے تحفظ اور پاکستانے کے بنانے اور اس کی حفاظت کے لیئے علماء نے ماضی میں تاریخی کردار ادا کیا ہے اور کر رہے ہیں اور کرتے رہیں گے انہوں نے کہاکہ ہم پر امن جدوجہد پریقین رکھتے ہیں اور پر امن جدو جہد کے ذریعے ملک میں مکمل اسلامی نظام کا نفاذ کے لیئے کوشاں ہیں انہوں نے کہاکہ جے یو آئی پا کستان کے اسلامی تشخص کو بچانے کے لیئے مصروف عمل ہے اور پاکستان کو سیکولر ریاست بنانے والوں کے خواب چکنا چور ہوں گے مولانا محمد امجدخان نے کہاکہ عقیدہ ختم نبوت اساسی عقیدہ ہے اس بغیر نماز حج روزہ اور کوئی عمل بھی اللہ کا ہاں قبول نہیں ہے انہوں نے کہاکہ عقیدہ ختم نبوت اللہ اور اس کے رسول کافیصلہ ہے انہوں نے کہاکہ پاکستان کی قومی اسمبلی نے 74ء ؁ میں اسی فیصلے کو آئینی اور قانونی شکل دی تھی انہوں نے کہاکہ اسلام کے نام پر بننے والے ملک میں ختم نبوت اور ناموس رسالت کے خلاف کوئی سازش کامیاب نہیں ہو سکتی ہے ۔مولانا اللہ وسایا ،مولانا گوہر علی شاہ اور مولانا غلام صادق نے کہا کہ نبی ؐ کے نبوت کے باغیوں کا مقابلہ پار لیمنٹ کے اندر اور باہر علماء اور عمائدین کیا1953ء ؁ میں دس ہزار سے زائد افراد نے جام شہادت نوش کیا 1974ء ؁ میں تمام مسالک نے عقیدہ ختم نبوت کے تحفظ کے لیئے شرعی اور قانونی جنگ لڑی بالآخر انھیں کا میابی حاصل ہوئی انہوں نے کہا کہ علماء اور عوام عقیدہ ختم نبوت کے تحفظ اور ارض پا کستان کے دفاع کے لیئے ہر قر بانی دینے کے لیئے تیار ہیں انہوں نے کہاکہ مولانا عطاء اللہ شاہ بخاری ؒ ،پیر مہر علی شاہ ،مولانا احمد علی لاہور ،مولانا مفتی محمود ؒ ،مولانا محمد عبد اللہ در خواستی ،مولانا غلام غوث ہزاروی ،مولانا شاہ احمد نورانی ،مولانا عبد الحق ،مولانا یوسف بنوری ،مولانا محمد اجمل خان ،مولانا خواجہ خان محمد ،مولانا صدر الدین شہید اور پروفیسر غفور احمد اور دیگر اکابرین نے تاریخی کردار ادا کیا ہے اور ان اکا برین کے مشن کو قائد جمعیت مولانا فضل الرحمن اگے بڑھا رہے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1