جرمنی اور افغانستان کے مابین پناہ گزینوں کی واپسی کیلئے معاہدہ

جرمنی اور افغانستان کے مابین پناہ گزینوں کی واپسی کیلئے معاہدہ

برلن(اے پی پی) جرمنی کی وزارت داخلہ اور افغان حکام نے جرمنی میں موجود افغان پناہ گزینوں کی وطن واپسی کے لیے ایک معاہدہ طے کر لیا ہے۔ افغان حکومت مالی معاونت کے عوض اپنے شہریوں کی وطن واپسی کے لیے جرمن حکومت سے تعاون کرے گی۔جرمن جریدے ڈیئر شپیگل میں شائع ہونے والی ایک رپورٹ کے مطابق افغان تارکین وطن کی ملک بدری اور افغانستان واپسی سے متعلق جرمنی کی وفاقی وزارتِ داخلہ اور افغان نائب وزیر داخلہ کے مابین مذاکرات جرمن دارالحکومت برلن میں ہوئے۔ افغان تارکین وطن کی ملک بدری کے طریقہ کار کے بارے میں دونوں ممالک کے مابین اختلافات پائے جاتے تھے تاہم شپیگل کے مطابق ان مذکرات کے دوران معاہدے کی جزیات پر تفصیلی بات چیت ہوئی جس کے بعد جرمنی اور افغانستان ایک مفاہمتی یادداشت پر متفق ہو گئے۔ افغان وفد نے اس بات پر بھی اتفاق کیا ہے کہ افغان شہریوں کو چارٹرڈ طیاروں کے ذریعے افغانستان واپس بھیجا جائے گا۔ یہ چارٹرڈ طیارے ایک پرواز میں پچاس تارکین وطن کو واپس افغانستان پہنچائیں گے۔ علاوہ ازیں افغان حکومت نے یہ وعدہ بھی کیا ہے کہ جرمنی سے ملک بدر کیے جانے والی افغان خواتین اور بچوں کو ممکنہ طور پر درپیش خطرات کا تدارک بھی کیا جائے گا۔ جرمن حکومت اس ضمن میں افغانستان کو سالانہ 430 ملین یورو اضافی امداد فراہم کرے گی۔

مزید : عالمی منظر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...