فیس واپس مانگنے پر نجی میڈیکل و ڈینٹل کالج انتظامیہ کا تشدد ‘ والد کی درخواست پر پرنسپل سمیت 6 افراد کو عدالت نے طلب کرلیا

فیس واپس مانگنے پر نجی میڈیکل و ڈینٹل کالج انتظامیہ کا تشدد ‘ والد کی ...

ملتان (خبر نگار خصو صی)جوڈیشل مجسٹریٹ ملتان عابد علی نے پرائیویٹ میڈیکل وڈینٹل کالج کی انتظامیہ کی جانب سے فیس واپس مانگنے پر تشدد کرنے کی درخواست پر پرنسپل سمیت 6 افراد کو 5 اکتوبر کو پیش ہونیکا حکم دیاہے۔فاضل عدالت میں ملتان کے محمد عظیم نے درخواست دائر کی تھی کہ اس نے اپنی بیٹی کو مقامی پرائیویٹ میڈیکل وڈینٹل کالج(بقیہ نمبر26صفحہ12پر )

میں داخلہ دلوایا اور داخلہ کے نام پرلاکھوں روپے بٹورلئے گئے بعد ازاں اس کی بیٹی کو کالج سے نکال دیا گیا تو اس نے فیس واپس مانگی جس پر کالج انتظامیہ کی جانب سے اس کو محبوس کرکے تشدد کانشانہ بنایاگیا اور جیب سے 60 ہزارروپے نقد اور 13 ہزارروپے کے 2 موبائل نکال لئے گئے اورمقامی پولیس کی جانب سے اس کو چھڑانے کے باوجود مقدمہ کی کارروائی نہیں کی گئی ہے جس پرپرائیویٹ استغاثہ دائر کیا جارہا ہے۔فاضل عدالت ابتدائی بیان اور شہادتیں ریکارڈ کرنے کے بعد ڈاکٹر شبیر ناصر،ڈاکٹر زاہد حبیب قریشی ،ڈاکٹر اظہر ،عمران،محمد صفدر اور محمد اصغر کو طلب کرلیا ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...