یو ایس اوپن: واورینکا نے سخت مقابلے کے بعد جاکووچ کو شکست دے کر پہلی بار ٹائٹل جیت لیا

یو ایس اوپن: واورینکا نے سخت مقابلے کے بعد جاکووچ کو شکست دے کر پہلی بار ٹائٹل ...
یو ایس اوپن: واورینکا نے سخت مقابلے کے بعد جاکووچ کو شکست دے کر پہلی بار ٹائٹل جیت لیا

  

نیو یارک(نیوز ڈیسک) سوئس ٹینس سٹار سٹین واورینکا نے یو ایس اوپن کے فائنل میں عالمی نمبر ون سربیا کے نواک جاکووچ کو سخت مقابلے کے بعد شکست دیدی۔ وہ یو ایس اوپن جیتنے والے دوسرے سوئس کھلاڑی ہیں۔ ان سے پہلر فاجر فیڈرر کئی بار یہ اعزاز حاصل کر چکے ہیں۔

فیڈرر کو اپنا آئیڈیل ماننے والے واورینکا نے عالمی نمبر ون کو پہلے سیٹ میں شکست کے بعد اگلے تین سیٹ جیت کر شکست سے دوچار کیا۔انہوں نے (6.7)6.4,7.5اور 6.3سے کامیابی حاصل کی۔تین گھنٹے سے زائد وقت تک جاری رہنے والے اس میچ کے دوران جاکووچ نے متعدد بار اپنے ٹرینر اور فزیو کو بلایا اور ان سے مالش کروائی۔ وہ پہلا سیٹ جیتنے کے بعد سے ہی تھکے ہوئے محسوس ہورہے تھے اور ایسا لگ رہا تھا کہ وہ دستبردار ہو جائیں گے لیکن انہوں نے میچ مکمل کیا۔

یو ایس اوپن: جرمنی کی اینجلک کربر خواتین کا ٹائٹل جیتنے کے ساتھ رینکنگ میں پہلی پوزیشن پر بھی براجمان

میچ کے بعد واورینکا نے کہا کہ جاکووچ ایک چیمپیئن ہے ۔ انہوں نے ثابت کر دیا کہ وہ زخمی ہونے کے باوجود کتنے خطرناک اور دلیر ہیں ۔ انہوں نے تماشائیوں کو بھر پور محظوظ کیا ۔ میں ان کو سلام پیش کرتا ہوں وہ واقعی ہی نمبر ون ہیں۔ جاکووچ کا اس موقع پر کہنا تھا کہ پہلا سیٹ جیتنے کے بعد میری ٹانگوں اور کمر میں درد شروع ہوگیا۔ میں نے اپنی بھر پور کوشش کی کہ میچ جیت سکوں لیکن واورینکا کے شاندار کھیل نے میری ایک نہ چلنے دی۔ انہوں نے واورینکا کو مبارکباد بھی دی۔

یو ایس اوپن: سٹین واورینکا کی ٹورنامنٹ میں شاندار واپسی، فائنل میں جاکووچ کے مدمقابل

واضح رہے کہ اس ٹورنامنٹ کے ابتدائی دنوں میں واورینکا کیخلاف جیت کیلئے برطانیہ کے کھلاڑی کو ایک پوائنٹ درکار تھا لیکن وہ ایک پوائنٹ لینے میں ناکام رہے جس کے بعد واورینکا نے پیچھے مڑ کر نہیں دیکھا اور ٹائٹل لے اڑے۔

مزید : کھیل