شدید علالت میں بھی سعودی مفتی اعظم نے زوردار اعلان کردیا، عید کے روز پیغام بھجوادیا

شدید علالت میں بھی سعودی مفتی اعظم نے زوردار اعلان کردیا، عید کے روز پیغام ...
شدید علالت میں بھی سعودی مفتی اعظم نے زوردار اعلان کردیا، عید کے روز پیغام بھجوادیا

  

مکہ (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی مفتی اعظم شیخ عبدالعزیز الشیخ علالت کے باعث خطبہ حج تو نہ دے سکے البتہ عید کے روز کچھ حساس معاملات کو موضوع بناتے ہوئے ایک زوردار بیان ضرور جاری کر دیا۔

عرب نیوز کی رپورٹ کے مطابق مفتی اعظم نے ایرانی شہریوں کو حج سے محروم رکھنے کے ایرانی الزامات کو ناصرف جھوٹ قرار دیا بلکہ ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ یہ الزامات ایران کی جانب سے اپنے داخلی معاملات سے دنیا کی نظر ہٹانے اور عالمی میڈیا کی آنکھوں میں دھول جھونکنے کی کوشش ہے۔ ان کا کہنا تھا ”اسلام میں حج کا مطلب عبادت اور اطاعت ہے، یہ جہالت اور سرکشی پھیلانے کا پلیٹ فارم نہیں ہے۔ مسلمانوں کے درمیان جھوٹ اور سرکشی پھیلانے والوں کے لئے کوئی جگہ نہیں۔“

امام کعبہ نے 12سال کی عمر میں قرآن حفظ کیا،شریعہ میں پی ایچ ڈی اور کئی کتابوں کے مصنف ہیں:رپورٹ

ان کا مزید کہنا تھا کہ سعودی مملکت نے حرمین الشریفین کی خدمت کی ذمہ داری اٹھائی ہے لہٰذا مملکت کو یہ حق حاصل ہے کہ وہ زائرین کے تحفظ کے لئے ضروری اقدامات کرے اور قواعد و ضوابط وضع کرے۔ انہوں نے حجاج کرام کو بھی تلقین کی کہ وہ انتشار، نفاق اور سرکشی سے خود کو دور رکھتے ہوئے صرف اور صرف عبادت پر توجہ رکھیں۔

مزید : عرب دنیا