وہ ملک جہاں جینز کی نیلی پتلون پہننے پر پابندی لگادی گئی، کونسا ملک ہے اور ایسا کیوں کیا گیا؟ جواب جان کر آپ کا بھی منہ کھلا کا کھلا رہ جائے گا

وہ ملک جہاں جینز کی نیلی پتلون پہننے پر پابندی لگادی گئی، کونسا ملک ہے اور ...
وہ ملک جہاں جینز کی نیلی پتلون پہننے پر پابندی لگادی گئی، کونسا ملک ہے اور ایسا کیوں کیا گیا؟ جواب جان کر آپ کا بھی منہ کھلا کا کھلا رہ جائے گا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

پیانگ یانگ (نیوز ڈیسک) نیلے رنگ کی جینز کا شمار دنیا کے مقبول ترین ملبوسات میں ہوتا ہے اور شاید ہی کوئی جگہ ایسی ہو جہاں اس کا استعمال دیکھنے میں نہ آتا ہو، سوائے شمالی کوریا کے، جہاں یہ پتلون پہننے والے کو جیل بھی جانا پڑسکتا ہے۔

اخبار ٹائمز آف انڈیا کی رپورٹ کے مطابق شمالی کوریا دنیا کا واحد ملک ہے جہاں نیلے رنگ کی جینز پہننا جرم ہے کیونکہ حکومت اسے امریکی استعمار کی علامت قرار دیتی ہے، شمالی کوریائی حکام اس سے نفرت کرتے ہیں اور اس کا پہننا انتہائی معیوب سمجھا جاتا ہے۔ ملک میں دیگر رنگوں کی جینز پہننے کی اجازت ہے لیکن نیلے رنگ سے ملتے جلتے رنگوں کو احتیاطاً نہیں پہنا جاتاکہ کہیں کوئی پولیس والا غلط فہمی کی بنا پر پکڑ کر نہ لے جائے۔

وہ ملک جہاں پر عدالت نے مَردوں کو سرعام خود لذتی کی کھلی چھٹی دے دی، شرمناک حرکت کو قانونی قرار دے دیا گیا

اس ملک میں صرف نیلی جینز ہی ممنوع نہیں ہے بلکہ انٹرنیٹ بھی عام شہریوں کو دستیاب نہیں ہے، جبکہ ہر قسم کے مذہبی نظریات اور عبادات پر بھی پابندی ہے۔ شمالی کوریا کے شہریوں کو صرف نظریاتی پابندیوں کا ہی سامنا نہیں بلکہ اور بھی طرح طرح کی پابندیاں عائد ہیں۔ مثال کے طور پر یہ ممکن نہیں کہ آپ اپنی مرضی سے بال کٹوا سکیں، بلکہ حکومت کی طرف سے جاری کئے گئے 28 ہیئر کٹ سٹائلز میں سے کسی ایک کے مطابق کٹنگ کروا سکتے ہیں۔ حکومت پر تنقید، بیرون ملک کال کرنا اور باہر کے ملکوں کا سفر بھی ممنوع ہے، اور یہی وجہ ہے کہ بیرونی دنیا اس عجیب و غریب ملک کے اصل حالات کے بارے میں بہت کم جانتی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس