قصور ، خاوند نے بیوی اور 3بیٹیاں قتل کر دیں ، الہ آباد ، باپ نے 3بچے زندہ جلا دیئے

قصور ، خاوند نے بیوی اور 3بیٹیاں قتل کر دیں ، الہ آباد ، باپ نے 3بچے زندہ جلا ...

قصور،الہ آباد(بیورورپورٹ)قصور میں بدچلنی کے شبہ میں ایک شخص نے بیوی اور تین بیٹیوں کو ٹوکہ سے ذبح کرکے قتل کر دیا جبکہ الہ آباد میں سفاک والد نے 6دن کی معصوم بچی سمیت اپنے تین بچوں کو پٹرول چھڑک کر آگ لگا دی جس سے جھلس کر تینوں بچے جاں بحق جبکہ سفاک والد شدید زخمی ہو گیا ۔پولیس تھانہ بی ڈویژن کے مطابق سفاک قاتل محمد حنیف مقامی سکول میں مالی ہے وہ گنڈا سنگھ کے علاقہ کا رہنے والا ہے اور قصور میں کرائے کے ایک مکان میں تین بیٹوں اور بیوی کے ہمراہ رہائش پذیر تھا۔ محمد حنیف کو اپنی بیوی کے کردار پر شبہ تھا اور اسی بناء پر گھر میں اکثر جھگڑا رہتا تھا گزشتہ رات تین بجے کے قریب ملزم نے پہلے سے ترتیب دیے گئے پلان کے مطابق اپنی تین بیٹیوں کو ایک کمرے میں بند کر دیا اور ٹوکہ نکال کر اپنی پینتالیس سالہ بیوی شاہد ہ بی بی ،سولہ سالہ بیٹی طیبہ ،چودہ سالہ لائبہ اور آٹھ سالہ ثمرہ کو یکے بعد دیگرے قتل کر دیا ۔شور کی آواز سن کر آنے والے اہل علاقہ سے بھی ملزم بدتمیزی کرتا رہامگر اہل علاقہ نے ملزم کو پکڑ کرپولیس کے حوالے کر دیا ۔اہل علاقہ نے بتایا کہ مقتولہ 45سالہ شاہدہ بی بی اور اس کی تینوں بیٹیاں پرہیزگار تھیں ان کا کردار مشکوک نہیں تھا ۔پولیس تھانہ بی ڈویژن نے مقتولہ شاہدہ بی بی کے بھائی کی رپورٹ پر مقدمہ درج کر لیا ہے۔ دوسرا واقعہ تھانہ الہ آباد کے علاقہ پنڈی جٹاں میں پیش آیا جہاں پر سفاک والد نے اپنے تین بچوں کو پٹرول چھڑک کر آگ لگا دی جس سے وہ جھلس کر موقع پر دم توڑ گئے۔تفصیلات کے مطابق پنڈی جٹاں کے رہائشی علی محمد ولد نورمحمد قوم میو کا ایک روز قبل اپنی بیوی سے جھگڑا ہوگیا تو علی محمد کی بیوی ناراض ہوکر اپنے میکے چلی گئی جس پر علی محمد نے گھریلو ناچاقی سے دلبرداشتہ ہوکر گھر میں ہی اپنے تین بچوں سمیت خودکو آگ لگالی جس کے نتیجہ میں تینوں معصوم بچے حلیماں بی بی بعمر اڑھائی سال،محمد عبداللہ بعمر ایک سال اور 6دن کی معصوم بچی جس کا ابھی تک نام بھی نہیں رکھا گیا تھا جھلس کر جاں بحق ہوگئیں جبکہ علی محمد کو شدید زخمی حالت میں لاہور جناح ہسپتال ریفر کردیا گیا ہے جبکہ علی محمد کا والد نورمحمد ،والدہ اکبری بی بی اور علی رضا ریسکیو کرتے ہوئے بھی جھلس گئے جنہیں طبی امداد کیلئے ہسپتال منتقل کردیا گیا ۔

قصور/الہ آباد

مزید : صفحہ اول