’یہ میری بیوی تھی اور۔۔۔‘ آدمی بیگم کا کٹا ہوا سر ہاتھ میں اُٹھا کر تھانے پہنچ گیا اور ایسی بات کہہ دی کہ پولیس والوں کے بھی ہوش اُڑگئے

12 ستمبر 2018 (18:45)

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) غیرت کے نام پر قتل کی خبریں گاہے ہمارے یہاں بھی آتی رہتی ہیں لیکن گزشتہ روز بھارت میں غیرت کے نام پر خاتون کے قتل کی ایسی ہولناک واردات ہوئی ہے کہ سن کر آدمی کانپ اٹھے۔ میل آن لائن کے مطابق یہ واردات بھارتی ریاست کرناٹک کے ضلع چھکمگلورومیں واقع قصبے اجم پورہ میں ہوئی جہاں 35سالہ ستیش نامی شخص اپنی بیوی روپا کا سرقلم کرکے اسے اٹھائے پولیس سٹیشن جا پہنچا۔ یہ منظر دیکھ کر پولیس والوں کے بھی ہوش اڑ گئے۔


ستیش نے روپا کا کٹا ہوا سر سیاہ رنگ کے شاپنگ بیگ ڈال رکھا تھا۔ تھانے جا کر اس نے بیگ سے خاتون کا سر نکالا اور پولیس کو بتایا کہ ”یہ میری بیوی کا سر ہے۔اس کے سنیل نامی شخص کے ساتھ تعلقات تھے، میں نے انہیں رنگے ہاتھوں پکڑ لیا اور اسے مارڈالا۔“ جب اس نے سر بیگ سے نکالا تو ایک پولیس آفیسر چیخ کر بولا ’اسے واپس بیگ میں ڈالو۔‘ ستیش نے مزید بتایا کہ ”میں نے اپنی بیوی کو بہت پیار دیا لیکن اس نے مجرمانہ ریکارڈ کے حامل شخص سنیل کے ساتھ تعلقات استوار کر لیے۔ اس نے 3لاکھ روپے(تقریباً 5لاکھ 11ہزار پاکستانی روپے) کا قرض بھی لے کروہ رقم سنیل کو دے دی تھی۔“

مزیدخبریں