’میں امریکہ میں پیدا ہوا تھا، 14 سال پہلے پاکستان گیا، اب بینک اکاﺅنٹ کھلوانے گیا تو۔۔۔‘ امریکہ سے پاکستان منتقل ہونے والے شہری کی انتہائی افسوسناک کہانی

’میں امریکہ میں پیدا ہوا تھا، 14 سال پہلے پاکستان گیا، اب بینک اکاﺅنٹ ...
’میں امریکہ میں پیدا ہوا تھا، 14 سال پہلے پاکستان گیا، اب بینک اکاﺅنٹ کھلوانے گیا تو۔۔۔‘ امریکہ سے پاکستان منتقل ہونے والے شہری کی انتہائی افسوسناک کہانی

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)ایسے بہت سے پاکستانی ہیں جو بیرون ملک اچھی بھلی زندگی چھوڑ کر اپنے وطن میں رہنے کے لئے واپس آ جاتے ہیں، مگر بدقسمتی سے ان کے ساتھ کچھ اچھا سلوک نہیں ہوتا۔ بچپن میں امریکا سے پاکستان چلے آنے اور پھر ہمیشہ یہاں رہنے والے ایک پاکستانی کے ساتھ بھی ایسا ہی سلوک جاری ہے جس پر وہ بے حد پریشان ہے۔ سوشل میڈیا ویب سائٹ ریڈٹ پر اس نوجوان نے اپنے مسائل کا احوال کچھ یوں بیان کیا ہے:

”میری پیدائش امریکہ میں ہوئی لیکن 2003ءمیں، جب میری عمر 9سال تھی، میں پاکستان منتقل ہوگیا۔ میں یہاں اتنا عرصہ قیام کرچکا تھا کہ 2013ءمیں، جب میری عمر 19 سال تھی، مجھے شناختی کارڈ جاری کردیا گیا۔ تاہم، آج جب میں بینک الحبیب گیا تاکہ اپنا پہلا بینک اکاﺅنٹ کھول سکوں تو وہ کہنے لگے کیونکہ میری پیدائش امریکہ میں ہوئی ہے تو مجھے ایک اضافی فارم پر کرنا ہوگا تاکہ آئی آر ایس کو معلومات فراہم کی جاسکیں۔ انہوں نے مجھے اس مقصد کے لئے W-9 فارم دے دیا۔ میں نے بتایا کہ میں سالوں سے پاکستان میں مقیم ہوں، کبھی باہر نہیں گیا، اور کبھی واپس جانے کا ارادہ نہیں رکھتا۔ جب میں نے انہیں اپنی صورتحال سے آگاہ کیا تو انہوں نے مجھے ایک W-8bnفارم دے دیا اور اس پر دستخط کرنے کو کہا جبکہ مجھے یہ تجویز بھی دی کہ میں W-9 فارم پر کروں کیونکہ یہ میرے لئے نسبتاً محفوظ ہوگا۔ میں نے بینک اکاﺅنٹ کھولنا ہے لیکن ایک کے بعد ایک نئی شق اور نئے مطالبے کا سلسلہ ختم ہونے میں نہیں آ رہا۔ اس ساری صورتحال نے مجھے بہت کنفیوژ کررکھا ہے۔ براہ کرم کوئی میری رہنمائی کرے کہ میں کیا کروں۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس /علاقائی /اسلام آباد