قائداعظم نے علیحدہ وطن دلا کر مسلمانوں پر احسان کیا،اعجاز چودھری

قائداعظم نے علیحدہ وطن دلا کر مسلمانوں پر احسان کیا،اعجاز چودھری

لاہو(نمائندہ خصوصی) تحریک انصاف پنجاب کے زیراہتمام بابائے قوم قائداعظم محمد علی جناح کی 71 ویں برسی کے موقع پر قائد کے کشمیر کے موضوع پر سیمینار کا اہتمام کیا گیا،جس کی صدارت صوبائی صدر اعجازاحمدچوہدری نے کی، سیمینار سے اعجازاحمدچوہدری، ایم این اے و پارلیمانی سیکرٹری نوشین حامد معراج، ایم پی اے شاوانہ بشیر، پارٹی رہنماء روبینہ شاہین، ملک عامر کھوکھر اورعرفان حسن سمیت دیگر قائدین نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ برصغیر کے مسلمانوں نے قائداعظم محمد علی جناح کی ولولہ انگیز قیادت میں وہ شاندار جدوجہد کی جس کی بدولت پاکسان معرض وجود میں آیا آزادی بہت بڑی نعمت ہے اس کی جتنی قدر کی جائے وہ کم ہے، برصغیر کے مسلمانوں کو قائداعظم محمد علی جناح نے آزادی اور علیحدہ وطن دلا کر بہت بڑا احسان کیا، پاکستان کی نوجوان نسل قائداعظم کے سنہری اصول اور ان کی تعلیمات پر عمل پیرا ہو کر دنیا کی ترقی یافتہ قوموں کا مقابلہ کر سکتی ہے، میں پاکستانی قوم م سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ اپنی بنیاد کی طرف چلی جائے۔

دنیا بھر میں قومیں اپنی بنیاد کی طرف لوٹ رہی ہیں، قائد اعظم نے زندگی میں کبھی جھوٹ نہیں بولا تھا اصولوں کے مطابق زندگی بسر کی، کبھی کسی کے سامنے نہیں جھکیں تھے اور اصول اور قانون کو کبھی نہیں توڑا تھا، پاکستانی قوم قائداعظم محمد علی جناح کی شکرگزار ہے، قائدین نے کہاکہ عظیم قومیں کبھی مایوس نہیں ہوتیں، عمران خان نے مشکل حالات کو چیلنج سمجھتے ہوئے حکومت سنبھالی، آج کشمیر کا مقدمہ عالمی سطح پر اجاگر ہو چکا ہے، عمران خان بڑی دلیری، بہادری اور جرات سے ملک کو بحرانوں سے نکالنے، ملکی معیشت کو مستحکم کرنے میں دن رات کوشاں ہیں، ملک کو70سالوں سے نوسربازو، ٹھگوں، ڈاکوؤں اور لٹیروں نے لوٹنے کے سوا کچھ نہیں کیا، مقبوضہ کشمیر کے 80 لاکھ لوگوں کو پنجرے کے اندر قابض بھارتی فوج نے غیر قانونی طور پر بند کررکھا ہے، گجرات کے قصائی نریندر مودی نے مقبوضہ کشمیر کو عقوبت خانے میں تبدیل کردیا ہے، عالمی برادری کی مجرمانہ خاموشی لمحہ فکریہ ہے، مسئلہ کشمیر کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں اور کشمیری عوام کی امنگوں کے مطابق حل ہونا چاہئے، بھارت اور مودی کے منہ پر پے در پے طمانچے لگ رہے ہیں، جنیوا میں انسانی حقوق کونسل کے ممبران نے کشمیر میں بھارتی مظالم کے خلا ف آواز بلند کی ہے، سیمینار سے قائدین نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ پاکستان میں اقلیتیں آزادی سے رہ رہی ہیں جبکہ بھارت میں مسلمانوں سمیت دیگر اقلیتوں کی زندگیاں اجیرن بنادی ہیں، بھارت مقبوضہ کشمیر میں مسلم اکثریت کو اقلیت میں بدلنا چاہتا ہے، بھارت مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کی نسل کشی کررہا ہے،بھارت سے 6 ہفتوں سے مقبوضہ کشمیر کو دنیا کی سب سے بڑی جیل میں تبدیل کر دیا ہے، عالمی میڈیا کی رپورٹ میں کشمیری شہری نے کہاکہ ہم پرتشدد مت کریں بلکہ ہمیں گولی مار دیں، بھارت کشمیرسے توجہ ہٹانے کے لئے جعلی آپریشن کررہا ہے اور بے بنیادمنفی پروپیگنڈہ کررہا ہے جس کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں کشمیریوں کی جدوجہد صرف آزادی کے لئے ہے، پاکستان کشمیریوں کی پست پر کھڑا ہے،پی ٹی آئی کی حکومت انسانی حقوق کونسل سمیت دیگر فورمز پر جموں و کشمیر کی عوام کا مقدمہ لڑتی رہے گی، بھارت مقبوضہ کشمیر کے انسانی اور بنیادی حقوق کوپاؤں تلے روند رہا ہے، مقبوضہ کشمیر میں خوراک اور ادویات کی شدید قلت ہے، بھارتی ظلم و بریت 21 ویں صدی میں ہو رہی ہے، بھارت ظلم و بربریت کے ذریعے کشمیریوں کی آزادی کی جدوجہد کو زیادہ دیر دبا نہیں سکتا،بھارت 6 ہفتوں سے کشمیری حریت قیادت کو نظر بند کررکھا ہے، بھارتی فورسز کشمیر میں نوجوانوں پر بہیمانہ تشدد کررہی ہیں، انٹرنیشنل میڈیا نے کشمیر میں بھارتی مظالم کو بے نقاب کیا، کوئی قوم ترقی نہیں سکتی جب تک اس کی خواتین مردوں کے شانہ بشانہ کام نہ کریں، پاکستان ترقی کی راہ پر گامزن ہو چکا ہے، پی ٹی آئی حکومت کی کامیاب خارجہ پالیسیوں کی بدولت کشمیر کا مسئلہ ہر فورم پر اٹھ رہا ہے اور مظلوم کشمیریوں کی آواز سنی جا رہی ہے، بھارت کو مقبوضہ کشمیر سے اپنا ظلم و ستم بند کرنا ہو گا اور کشمیر یوں کو حقیقی معنوں میں آزادی دینی ہو گی، اس موقع پر قائداعظم محمد علی جناح کی درجات کی بلندی اور کشمیری عوام کی آزادی کے لئے دعاء کی، کانفرنس میں ندیم قادر بھنڈر، عرفان حسن، مصباح ظفر، ڈاکٹر انیسہ فاطمہ، ایم پی اے فرحت فاروق، توقیر شاہ، گوہر عزیز، آپا نادرہ، نجمہ حلیم، حمیرا خان، زریں رحمان، واجد علی خان، ثاقب سندھو، آفتاب افگن، عقیل صدیقی سمیت وکلاء، انصاف یوتھ، آئی ایس ایف، وومن ونگ سمیت بڑی تعداد میں نوجوانوں نے شرکت کی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...