نجی سکولوں میں اضافی فیسوں کی وصولی کیخلاف دائر درخواست کی سماعت

نجی سکولوں میں اضافی فیسوں کی وصولی کیخلاف دائر درخواست کی سماعت

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ نے نجی سکولوں میں اضافی فیسوں کی وصولی کے خلاف دائر درخواست کی سماعت کے موقع پرسیکرٹری سکولز ایجوکیشن کے پیش نہ ہونے پرناراضی کا اظہار کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ کیوں نہ سیکرٹری سکولز ایجوکیشن کے وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے جائیں، جسٹس شاہد وحید خان نے سیکرٹری سکولز ایجوکیشن پنجاب کوآج 12ستمبر کوہرحال میں اپنی پیشی یقینی بنانے کی ہدایت کی ہے،کیس کی سماعت کے دوران ڈپٹی سیکرٹر ی سکول پیش ہوئے توعدالت نے استفسار کیا کہ کیاآج سیکرٹری دفتر نہیں آئے، عدالت تو9بجے لگتی ہے،آپ اب کیاکرنے آٓئیں ہیں؟کیا عدالتیں آپ کے دفاتر ہیں؟جہاں آپ چکردیتے رہیں،عدالت نے مزید کہا کہ سیکشن 7پرعمل درآمد کے لئے کیا اقدامات کئے جارہے ہیں،اگر کام ہورہے ہوتے تو یہاں لوگوں کو نہ آنا پڑتا،ڈپٹی سیکرٹری سکولز نے عدالت کو آگاہ کیا کہ کنفرم نہیں پتہ کہ سیکرٹری سکولزکہاں ہیں،پچھلے دنوں سیکرٹری سکولز وزیر اعلیٰ کے ساتھ مسلسل میٹنگز میں مصروف رہے،آج بھی سیکرٹری سکولزمصروفیت کی بناء پر عدالت پیش نہیں ہوئے،درخواست گزار کے وکیل نے کہا کہ اضافی فیسوں کے نام بدل کروالدین سے ہرماہ ہزاروں روپے بٹورے جارہے ہیں،عدالت نے سیکرٹری سکولز ایجوکیشن کوطلب کرتے ہوئے کیس کی مزید سماعت آج 12ستمبر پر ملتوی کردی۔

اضافی فیسیں

مزید :

صفحہ آخر -