میئر کراچی وسیم اختر کا آرٹیکل 149 کی حمایت کا اعلان،پورا شہر کوڑے کا ڈھیر بن کر رہ گیا،سندھ حکومت کوئی بات نہیں سن رہی: وسیم اختر

میئر کراچی وسیم اختر کا آرٹیکل 149 کی حمایت کا اعلان،پورا شہر کوڑے کا ڈھیر بن ...
میئر کراچی وسیم اختر کا آرٹیکل 149 کی حمایت کا اعلان،پورا شہر کوڑے کا ڈھیر بن کر رہ گیا،سندھ حکومت کوئی بات نہیں سن رہی: وسیم اختر

  


کرا چی (ڈیلی پاکستان آن لائن)میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ شہر کی بہتری کے لیے آرٹیکل 149(4)کا نفاذ کیا جاسکتا ہے، کسی بھی آئینی اقدام کی حمایت کرینگے۔

نجی ٹی وی کے مطابق ایک  تقریب سے خطاب کرتے ہوئے میئر کراچی وسیم اختر  کا کہنا تھا کہ آرٹیکل 149(4) آئین میں موجود ہے، اٹھارہویں ترمیم کی تیاری کے وقت اسے ختم کیا جاسکتا تھا لیکن نہیں کیا گیا، وزیر اعظم اگر سندھ حکومت کو گائیڈ لائن دیں اور حکومت قبول کرلے تواچھا ہوگا،جو بھی آئینی اقدام ہوگا وہ اس کی حمایت کریں گے،سولڈ ویسٹ مینجمنٹ کو دیئے گئے اربوں روپے کہاں گئے؟پورا شہر کوڑے کا ڈھیر بن کر رہ گیا ہے،سندھ حکومت کوئی بات نہیں سن رہی۔میئر  کراچی نے کہا کہ جب بنیادی حقوق پامال ہوں گے تو لوگ اٹھیں گے، بزنس مین ایم کیو ایم کے ساتھ کھڑے نہ ہوں لیکن شہرکیلئے آوازاٹھائیں،دنیا میں کراچی پہچانا جاتا ہے، اگریہ نظر انداز ہوگا تو دنیا میں اچھا پیغام نہیں جائے گا،کے ایم سی کے پاس وسائل نہیں ہیں کہ کچھ کرسکیں،جو پیسے ہمارے لیے ہوتے ہیں وہ بھی پورے نہیں ملتے۔انہوں نے کہا کہ فروغ نسیم نے بہتر طریقے سے بتایا ہے، اپنی تجاویز وفاق تک پہنچائیں گے، کراچی کے عوام کو بنیادی حقوق سے دور رکھا ہوا ہے، پورا شہر کوڑے کا ڈھیربناہوا ہے، جو اربوں روپیہ سندھ سولڈ ویسٹ کو دیاوہ کہاں گیا؟ شہری اب پوچھتے ہیں کہ ہمارے ٹیکس کا پیسا کہاں گیا؟۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی


loading...