شبقدر، سروکلی فیڈرز سے غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ، عوام مشتعل 

  شبقدر، سروکلی فیڈرز سے غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ، عوام مشتعل 

  

شبقدر (نمائندہ خصوصی)شبقدر حلیم زئی۔ کتوزئی۔ حاجی زئی۔ فاطمہ خیل اور بہلول خیل سرو کلی بجلی فیڈرز پر غیر اعلانیہ طویل بجلی بندش کا سلسلہ جاری۔ مقامی واپڈا کے افسران و اہلکاروں نے اپنی بدمعاشی شروع کر دی ہیں مسلسل بجلی بندش کم وولٹیج اور بار بار ٹرپنگ کے باعث علاقہ عوام سخت پریشانیوں سے دوچار  ۔ دن اور رات کے مختلف اوقات میں بار بار ٹرپنگ کی وجہ سے قیمتی الیکٹرانک اشیا جل کر ناکارہ،   بجلی کی غیر اعلانیہ ظالمانہ لوڈشیڈنگ کے باعث عوام میں سخت مایوسی پھیل گئی ہے بچوں میں مختلف بیماریاں پھیلنے لگی جبکہ مرد و خواتین ذہنی امراض میں مبتلا ہو گئے ہیں  ایک طرف این اے 23کے ایم این اے انور تاج عوام کو محکمہ واپڈا سے تعاون کے بیانات دے رہے ہیں متعدد بجلی فیڈرز صارفین نے میٹر کے لئے داخلے شروع کر دی ہیں جبکہ دوسری جانب مقامی واپڈا کے افسران اور اہلکاروں نے عوامی تعاون کا مذاق اڑانا شروع کر دیا ہیں شیڈول کے مطابق بجلی بھی  بند کر دی ہیں اور علاقہ عوام کو  بجلی کی فراہمی نہیں ہو رہی ہیں جس کی وجہ سے شبقدر بھر کے عوام بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ سے تنگ آگئے ہیں بجلی کی طویل اور ظالمانہ لوڈشیڈنگ کے باعث علاقہ میں نظام زندگی درہم برہم ہو گئی ہے گھروں اور مساجد میں پانی بھی ناپید ہو گیا ہے جب گھریلوں خواتین اور مریضوں کو سخت مشکلات کا سامنا ہیں شبقدر حلیم زئی۔ کتوزئی۔ حاجی زئی فاطمہ خیل۔ بہلول خیل۔ سروکلی اور دیگر علاقوں کے عوام نے ایم این اے این اے 23 ملک انور تاج سے پر زور مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ مقامی واپڈا کے اہلکاروں کا قبلہ درست کرکے بغیر کم وولٹیج اور بار بار ٹرپنگ کے شیڈول کے مطابق بجلی بحال کی جائے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -