توہین عدالت کی درخواستوں پر  آئی جی اور ایڈیشنل چیف سیکرٹری پنجاب کو نوٹس جاری 

  توہین عدالت کی درخواستوں پر  آئی جی اور ایڈیشنل چیف سیکرٹری پنجاب کو نوٹس ...

  

لاہور(نامہ نگار)لاہور ہائی کورٹ نے نئے آئی جی پولیس پنجاب انعام غنی کے خلاف پہلی توہین عدالت کی دائردرخواست پرنوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا ہے،جسٹس عائشہ اے ملک نے فیصل آباد تھانہ صدر کے ملازم دلبر حسین کی درخواست پر سماعت کی،درخواست گزارکا موقف ہے کہ اس کے بھائی گلزار احمد کو ملزمان نے قتل کر دیاجس پرپولیس نے ملزمان گرفتار کرکے انوسٹی گیشن شروع کر دی، ملزمان پر مبینہ تشدد کرنے کے الزام میں درخواست گزار کو معطل کر دیا گیاہے،عدالت نے درخواست آئی جی پنجاب پولیس کو بھجواتے ہوئے قانون کے مطابق فیصلہ کرنے کا حکم دیاجس پرعمل درآمد نہیں کیا جارہا جو توہین عدالت ہے، آئی جی پنجاب پولیس کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی کی جائے دوسری جانب لاہور ہائی کورٹ نے توہین عدالت کی درخواست پر ایڈیشنل چیف سیکرٹری پنجاب اعجاز احمد جعفرکو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا ہے،جسٹس عائشہ اے ملک نے شہری رانا صدیق کی درخواست پر سماعت کی،درخواست گزار کا موقف ہے کہ محکمہ داخلہ کے کہنے پر درخواست گزار کے پنجاب بینک کے اکاؤنٹس منجمد کر دیئے گئے،عدالت  نے پنجاب بینک میں اکاونٹس منجمد کرنے کا معاملہ ایڈشنل چیف سیکرٹری کو بھجواتے ہوئے قانون کے مطابق فیصلہ کرنے کا حکم دیاتھا،عدالت کے 12جون کے حکم پر عمل درآمد نہیں کیا جارہا جوتوہین عدالت ہے، عدالت سے استدعا ہے کہ ایڈیشنل چیف سیکرٹری پنجاب کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی عمل میں لائی جائے۔

نوٹس جاری 

مزید :

صفحہ آخر -