ہواوے گوگل پر جوابی وار کیلئے تیار، اہم اعلان کر دیا

ہواوے گوگل پر جوابی وار کیلئے تیار، اہم اعلان کر دیا
ہواوے گوگل پر جوابی وار کیلئے تیار، اہم اعلان کر دیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) معروف ٹیکنالوجی کمپنی ہواوے نے اپنے تیار کردہ ہارمونی آپریٹنگ سسٹم سے لیس سمارٹ فونز 2021ءمیں متعارف کرانے کا اعلان کر دیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق چینی کمپنی کی جانب سے یہ اعلان گزشتہ دنوں سالانہ ڈویلپر کانفرنس میں کیا گیا تاہم ہارمونی او ایس سے لیس فونز کی تیاری ہواوے موبائل سروسز سے مشروط ہے، یعنی کمپنی کتنی بڑی تعداد میں ایپس کو اپنی ایپ گیلری کا حصہ بناپاتی ہے۔

ہواوے موبائل سروسز امریکی پابندیوں کے باعث گوگل پلے سروسز تک رسائی ختم ہونے پر متعارف کرائی گئی تھیں اور اب تک ہواوے ایپ گیلری میں 96 ہزار ایپس کو شامل کیا جاچکا ہے جو جولائی میں 81 ہزار اور مارچ میں 60 ہزار تھی، اس کے مقابلے میں گوگل پلے اور ایپل یپ سٹور میں ایپس کی تعداد لاکھوں میں ہے۔

اپنے ایکوسسٹم میں مزید ایپس کو لانے کیلئے ہواوے نے ہارمونی او ایس 2 کے بیٹا ورژن کا اعلان کیا ہے جو موبائل ڈویلپرز کیلئے رواں سال کے آخر تک متعارف ہوگا جبکہ اس سے یہ بھی عندیہ ملتا ہے کہ فی الحال ہواوے فونز پر اینڈرائیڈ آپریٹنگ سسٹم ہی استعمال ہو گا۔ ہواوے کے نئے یوزر انٹرفیس ای ایم یو آئی 11 کو بھی ڈویلپر کانفرنس میں متعارف کرایا گیا، جو اینڈرائیڈ پر ہی کام کرے گا مگر اس اینڈرائیڈ 11 کی جگہ اینڈرائیڈ 10 کو زیادہ ترجیح دی گئی۔

خیال رہے کہ ہواوے کو گزشتہ سال امریکہ نے بلیک لسٹ کرتے ہوئے گوگل سمیت امریکی کمپنیوں کی ٹیکنالوجی سے رسائی تک روک دیا تھا جس کے بعد ہواوے کی جانب سے اینڈرائیڈ ایپ ایکوسسٹم کے متبادل کو تشکیل دیا گیا، ہارمونی او ایس 2.0 کو پہلے ٹیبلٹس، کار سسٹمز اور سمارٹ واچز کا حصہ بنایا جائے گا۔ ہواوے کا آپریٹنگ سسٹم اس وقت 49 کروڑ افراد تک مختلف ہارڈ ویئر ڈیوائسز کے ذریعے پہنچ چکا ہے اور اب وہ اس بڑھانا چاہتا ہے۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی -