ڈاکٹر عاصم کیس ،سندھ ہائیکورٹ نے انیس قائم خانی کی حفاظتی ضمانت 7 روز کیلئے منظور کرلی

ڈاکٹر عاصم کیس ،سندھ ہائیکورٹ نے انیس قائم خانی کی حفاظتی ضمانت 7 روز کیلئے ...

  



کراچی ( اے این این ) سندھ ہائیکورٹ نے انیس قائم خانی کی حفاظتی ضمانت 7 روز کیلئے منظور کرلی ٗ انیس قائم خانی پر دہشت گردوں کی معاونت اور ان کے علاج معالجے کی سہولت کاری کے الزامات ہیں ۔ تفصیلات کے مطابق سندھ ہائیکورٹ نے انیس قائم خانی کی حفاظتی ضمانت ایک لاکھ روپے کے مچلکے کے عوض منظور کی ہے ۔ انسداد دہشت گردی کی عدالت نے انیس قائم خانی کے وارنٹ گرفتاری جاری کررکھے ہیں ۔ گزشتہ روز پاک سرزمین پارٹی کے سربراہ مصطفی احمد کمال کے ہمراہ انیس قائم خانی سندھ ہائیکورٹ آئے جہاں انہوں نے حفاظتی ضمانت کی درخواست دائر کررکھی تھی ۔ جسٹس احمد علی شیخ کی سربراہی میں دورکنی بینچ نے درخواست کی سماعت کی جس میں ملزم انیس قائم خانی کی حفاظتی ضمانت منظورکرلی گئی ۔ واضح رہے کہ ڈاکٹر عاصم کے خلاف دہشت گردوں کی معاونت اور ان کے علاج سے متعلق کیس میں شریک ملزم انیس قائم خانی نے سندھ ہائی کورٹ میں درخواست ضمانت جمع کروارکھی تھی ۔ درخواست میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ انہوں نے کبھی بھی ڈاکٹر عاصم کو دہشت گردوں کے علاج کے لیے فون نہیں کیا ،اس معاملے سے ان کا کوئی تعلق نہیں اس لیے عدالت سے درخواست ہے کہ ان کی حفاظتی ضمانت منظور کی جائے۔واضح رہے کہ انیس قائم خانی پر دہشت گردوں کی معاونت اور ان کے علاج معالجے میں سہولت کاری کے الزامات ہیں اور اس مقدمے میں ان کے وارنٹ گرفتاری بھی جاری ہوچکے ہیں۔

ڈاکٹر عاصم کیس

مزید : پشاورصفحہ اول


loading...