مسائل کے حل کیلئے سب سے بہترین فورم پارلیمنٹ ہے ،رضا ہارون

مسائل کے حل کیلئے سب سے بہترین فورم پارلیمنٹ ہے ،رضا ہارون

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاک سرزمین پارٹی کے مرکزی رہنما رضا ہارون نے کہا ہے کہ قومی ایشوز کے حل کے لیے سب سے بہترین فورم پارلیمنٹ ہے ۔ پناما لیکس اسکینڈل اور دیگر ایشوز پر پارلیمنٹ ہی بہتر فیصلہ کر سکتی ہے ۔ پاکستان کے استحکام پر یقین رکھنے والی تمام محب وطن جماعتوں کے پاس جائیں گے اور انہیں اپنے منشور سے آگاہ اور 24 اپریل کے جلسے کی دعوت دیں گے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے منگل کو عوامی نیشنل پارٹی سندھ کے جنرل سیکرٹری محمد یونس بونیری اور دیگر سے مردان ہاؤس میں ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر پاک سرزمین پارٹی کے افتخار عالم ، اے این پی کے اورنگ زیب بونیری ، انیس شاہ ، رانا گل آفریدی اور دیگر بھی موجود تھے ۔ رضا ہارون نے کہا کہ 23 مارچ کو ہم نے اپنی جماعت کے قیام کا اعلان کیا اور 24 اپریل کو جلسہ کر رہے ہیں ۔ ہماری جماعت ایک نئی تنظیم ہے اور محب وطن تمام جماعتوں کے پاس جائیں گے ۔ اپنے نظریات اور خیالات سے انہیں آگاہ کریں گے اور ہماری کوشش ہو گی کہ متفقات پر جمع ہو جائیں ۔ ہماری جماعت لوگوں کو جوڑنے کی کوشش کرے گی ۔ ہم سب کو مل کر پاکستان کے لیے کام کرنا ہو گا ۔ اس لیے ہم سب کے پاس جا رہے ہیں ۔ آج ہم نے مسلم لیگ (ق) کے چوہدری پرویز الہی اور مسلم لیگ (ن) کے پرویز رشید کو بھی فون پر دعوت دی ہے ۔ جلد ان سے ملاقات بھی کریں گے ۔ متحدہ قومی موومنٹ کو دعوت دینے کے حوالے سے پوچھے گئے سوال پر انہوں نے کہا کہ پاکستان کے استحکام پر یقین رکھنے والی تمام محب وطن جماعتوں کے پاس جائیں گے اور سب سے ملاقات کرکے اپنے منشور سے انہیں آگاہ کریں گے ۔ سندھ کی قوم پرست جماعتوں کو بھی دعوت دیں گے ۔ ملک کی موجودہ صورت حال کے حوالے سے سوال پر کہا کہ پناما لیکس کی تحقیقات کس طرح سے ہو ، اس کو پارلیمنٹ نے طے کرنا ہے اور سب سے بہترین فورم یہی ہے ۔ عوام کو انفرادی فیصلے کرنے کے بجائے پارلیمنٹ کو فیصلہ کرنے دیا جائے تو بہتر ہے اور ہمیں امید ہے کہ پارلیمنٹ میں بیٹھے ہوئے لوگ ملک و قوم کے لیے مثبت فیصلے کریں گے ۔ میرپورخاص میں ایم کیو ایم اور پاک سرزمین پارٹی کے کارکنوں کے تصادم کے حوالے سے پوچھے گئے سوال پر انہوں نے کہا کہ حملہ ہم پر ہوا تھا اور ہم نے ان لوگوں کو معاف کر دیا ہے ، جنہوں نے حملہ کیا تھا ۔ میڈیا اور پولیس کو علم ہے کہ حملہ آور کون تھے ۔ اس موقع پر عوامی نیشنل پارٹی سندھ کے جنرل سیکریٹری یونس خان بونیری نے کہا کہ پاک سرزمین پارٹی کے رہنماؤں کو مردان ہاؤ آمد پر خوش آمدید کہتے ہیں شہر میں رواداری اور برداشت کی سیاست کے فروغ کا خیر مقدم کرتے ہیں گزشتہ چالیس سال سے شہر میں جو سیاست چل رہی ہے اس کا خاتمہ چاہتے ہیں کراچی سے خوف و دہشت کے سایوں کو ختم کرنا ہوگاشہر کے امن کے لیے اٹھائے گئے ہر اقدام کی حمایت کریں گے عوامی نیشنل پارٹی عدم تشدد کی سیاست پر یقین رکھتی ہے پاک سرزمین پارٹی کے 24 اپریل کے جلسے میں شرکت کی دعوت دی ہے چند روز میں پارٹی کا اجلاس بلاکر جلسہ عام میں شرکت کے حوالے سے کوئی حتمی فیصلہ کریں گے ہماری کوشش ہے کہ جلسہ عام میں شرکت کی دعوت کا مثبت جواب دیں اس موقع پر پاک سرزمین پارٹی کے رہنماء رضا ہارون نے کہا کہ عوامی نیشنل پارٹی کے دوستوں تہہ دل سے شکر گزار ہیں جنہوں نے ہمیں ا ویلکم کیا اور ہمارا موقف سنا خاص طور پر شکریہ ادا کرتے ہیں شاہی سید صاحب کا ان سے ہماری فون پر بات ہوئی جلسہ کی تیاریوں میں یہ بات ضروری ہے کہ نئی سیاسی جماعت اپنے نظریات لے کر ملک کی دوسری سیاسی پارٹیوں کے پاس جائے ہم اس سلسلے میں اپنے نظریات لے کر ان کے پاس آئے ہیں بہت سے ایشو ایسے ہیں جن پر ہمارے نظریات میں ہم آہنگی ہے ہم اپنے نظریات لے کر ملک کی محب وطن پارٹیوں کے پاس جارہے ہیں بہت سارے ایشو پر بات ہوئی کہ کہاں ہم ملکر کام کرسکتے ہیں،ہم چاہتے ہیں کہ لوگوں کو جوڑنے کی بات کی جائے چاہتے ہیں سب ایک دوسرے سے محبت کریں ہم سب ملکر پاکستان کیلئے کام کرنا چاہتے ہیں 24 اپریل کو ہمارا سیاسی جلسہ ہے اس لیے ہم سب کے پاس جارہے ہیں،شاہی سید سے بھی اس سلسلے میں بات ہوئی ہے ۔

مزید : کراچی صفحہ آخر