چوہدری نثار نے دوسروں کو بلیک میل کرنے کے لیے فائلیں رکھیں ہوئی ہیں ،پاناما لیکس پرچیف جسٹس کی سربراہی میں جوڈیشل کمیشن بنائیں ،عمران خان

چوہدری نثار نے دوسروں کو بلیک میل کرنے کے لیے فائلیں رکھیں ہوئی ہیں ،پاناما ...
چوہدری نثار نے دوسروں کو بلیک میل کرنے کے لیے فائلیں رکھیں ہوئی ہیں ،پاناما لیکس پرچیف جسٹس کی سربراہی میں جوڈیشل کمیشن بنائیں ،عمران خان

  



اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا ہے کہ پاناما لیکس کے معاملے پر چیف جسٹس کی سر براہی میں جوڈیشل کمیشن بنائیں ،ان کا کہنا ہے کہ چوہدری نثار نے دوسروں کو بلیک میل کرنے کے لیے کرپشن کی فائلیں رکھی ہوئی ہیں ۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے عمران خان نے کہا ہے کہ چھوٹا سا ٹولہ ہے جو پیسہ لوٹ کر باہر بھیجتا ہے ،یہ اقتدار میں آ کر پیسا بناتے ہیں اور منی لانڈرنگ کر کے پیسا باہر بھیجتے ہیں ،یہ ٹولا منی لانڈرنگ کے پیسے سے انتخابات میں دھاندلی کراتے ہیں اور پھر اسی چوری کے پیسے سے دوبارہ الیکشن لڑتے ہیں ۔ان کا کہنا تھا کہ یہ ٹولا اقتدار میں آکر پیسا بناتے ہیں ،ٹیکس چوری اور منی لانڈرنگ کر کے پیسہ باہر بھجواتے ہیں اور بڑے بڑے گھر خریدتے ہیں جس کا ثبوت یہ ہے کہ اقتدار سے پہلے ان کی دولت کتنی تھی اور بعد میں کتنی زیادہ ہوئی ۔انہوں نے کہا کہ حسن نواز نے 31مارچ کو لندن میں ساڑھے چھ سو کروڑ روپے کا گھر بیچا ،شریف خاندان نے لندن کے مے فیئر میں واقع فلیٹ پہلے کے خریدے ہوئے ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ چوہدری نثار کے بیان پر افسوس ہوا کہ میاں صاحب کے بیٹے جواب دیں گے ،چوہدری نثار نے اللہ کو جواب دینا ہے ،میاں نواز شریف کو نہیں ۔عمران خان نے کہا ک چوہدری نثار وزیر داخلہ ہوتے ہوئے اپوزیشن لیڈر کو کہتے ہیں میرے پاس آپ کی کرپشن کے ثبوت ہیں ۔اگر کوئی چوری کر رہا ہے تو اس کو پکڑنے کی ذمہ داری چوہدری نثار کی ہے لیکن انہوں نے دوسروں کو بلیک میل کرنے کے لیے فائلیں رکھی ہوئی ہیں ۔انہوں نے کہا کہ اعتزاز احسن نے زبردست باتیں کیں ،حکومت اس کا جواب دے ،حکومت کا کام الزامات لگانا نہیں بلکہ کرپشن کرنے والوں کو پکڑنا ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ ایک طرف وزیر اعظم کے پاس پیسہ نہیں تھا دوسری طرف آف شور کمپنیاں کھولی گئیں ،میاں صاحب نے اپنے اثاثے چھپائے ،یہ جرم ہے۔

عمران خان نے کہا کہ 24اپریل کو تحریک انصاف کا بڑا ایونٹ ہو گا جس میں آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے ۔ان کا کہنا تھا کہ حکومت نے تین سالوں میں 5ہزار ارب روپے قرضہ لیا ۔انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن میں عقل نہیں ہے ،ن لیگ کے کارکنوں کو کہہ رہا ہوں اپنے آپ کو ذلیل نہ کرو ۔عمران خان نے ن لیگ کے کارکنوں سے استفسار کیا کہ بنی گالا آ کر مجھ سے کیا پوچھو گے اور کیا ڈیمانڈ کرو گے ۔انہوں نے مزید کہا کہ جمائما کے گھر کے باہر احتجاج کر نے والے بے وقوف کیا مانگیں گے ۔

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...