چیونٹوں کے پر نکل آئے ، کچھ لوگ مجھے سیاست سے آؤٹ کرنے آئے ہیں : چودھری نثار

چیونٹوں کے پر نکل آئے ، کچھ لوگ مجھے سیاست سے آؤٹ کرنے آئے ہیں : چودھری نثار

  

واہ کینٹ(صباح نیوز) سابق وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے کہا ہے۔کہ چیونٹوں کے پر نکل آئے ہیں۔ اورکچھ لوگ مجھے سیاست سے آؤٹ کرنے آئے ہیں۔میاں نوازشریف اور شہباز شریف بھی اگر میرے ساتھ حساب کتاب کر لیں۔تو میرا قرض ان پر ہو گا ۔ان کا مجھ پر نہیں۔ نواز شریف کو اب بھی اگر میری وفاداری کا احساس نہیں ہے تو پھر کبھی نہ ہو گا۔مشکل وقت ہماری غلطیوں کی وجہ سے آیا۔پارٹی بچ گئی تو نواز شریف بھی بچ جائیں گے۔میں پارٹی میں موجود ہوں اور اپنے موقف پر قائم ہوں۔ان خیالات کا اظہار انھوں نے واہ جنرل ہسپتال میں ممبر پنجاب اسمبلی حاجی ملک عمر فاروق اور فیاض خان تنولی کی جانب سے اظہار تشکر کے سلسلہ میں منعقدہ ایک خصوسی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔چوہدری نثار علی خان نے کہا۔کہ میں مشکلات کے باوجود ثابت قدم رہا۔اور خدمت کی سیاست کو حلقہ میں روشناس کرایا۔میں نے اس حلقہ میں مسلم لیگ کو زندہ رکھا ۔ورنہ مجھ سے پہلے اس حلقہ میں مسلم لیگی امیدواروں کی ضمانتیں ضبط ہو جاتی تھیں۔اور یہاں مسلم لیگ کو زندہ کیا۔میں عرصہ 34 سال سے مسلم لیگ اور نواز شریف کے ساتھ ہوں۔اور ہمیشہ وفاداری نبھائی۔لیکن نوز شریف کو اب بھی میری وفاداری کا احساس نہیں تو پھر کبھی نہ ہو گا۔ میں نے ہمیشہ خدمت کی سیاست کی۔سیاست میں کبھی مال نہیں بنایا۔پاکستان اس وقت مشکل ترین حالات سے گذر رہا ہے۔سنگین حالات کے باوجود ہم زاتی لڑائیوں میں لگے ہوئے ہیں۔عزت کردار سے ملتی ہے۔عہدے سے نہیں۔انھوں نے کہا۔کہ واہ جنرل ہسپتال اس علاقہ کے لیے بہت بڑا تحفہ ہے۔اور یہ دو سال کے قلیل عرصہ میں تیار ہوا ہے۔اور اس پر 1.8ارب روپے لاگت آئی ہے۔فی الحال اس کا پہلا فیز مکمل ہو ا ہے۔اور یہ آج کے بعد فوری طور پر آپریشنل ہو جائے گا۔پاکستان کے عوام کی سب سے بڑی ضرورت صحت اور تعلیم کی سہولیات ہیں۔واہ جنرل ہسپتال کی تعمیر میں سابق چیئرمین پی او ایف بورڈ جنرل (ر) احسن محمود کی کاوشیں بھی شامل ہیں،جنھوں نے ہسپتال کے لیے زمین کا عطیہ دے کر اس کی تعمیر کو ممکن بنا یا۔واہ جنرل ہسپتال ضلع کا سب سے بڑا ہسپتال ہو گا۔

مزید :

صفحہ اول -