ملک کی ترقی کیلئے جامعات اور انڈسٹری میں رابطے میں ضروری ہیں:گورنرن سندھ

ملک کی ترقی کیلئے جامعات اور انڈسٹری میں رابطے میں ضروری ہیں:گورنرن سندھ

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) گورنر سندھ محمد زبیر نے کہا ہے تعلیمی اداروں اور انڈسٹری کے درمیان موثر رابطے قائم رکھنا بہت ضروری ہے تاکہ یونیورسٹی کے طلبہ کو ملکی انڈسٹری میں ہونے والی تیز رفتار ترقی اور نئی ٹیکنالوجی کے استعمال کے بارے معلومات حاصل ہوتی رہیں اور جب طلبہ اپنی تعلیم مکمل ہوجانے کے بعد عملی زندگی میں قدم رکھیں تو وہ اعلیٰ کارکردگی کا مظاہرہ کرسیکیں۔یہ بات انہوں نے جمعرات کے روز مقامی ہوٹل میں منعقد ہونے والے محمد علی جناح یونیورسٹی کراچی(ماجو) کے کا نوکیشن۔۸۱۰۲ سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہو ئے کہی۔اس موقع پر سال ۶۱۰۲ اور ۷۱۰۲ میں ایم بی اے،ایم ایس،ایم سی ایس،بی بی اے اور بی ایس کرنے والے طلبہ کو ڈگریاں اور نمایاں کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے طلبہ کو گولڈ میڈلز دیئے گئے۔ماجو کے صدر پروفیسر ڈاکٹر زبیر شیخ کے علاوہ یونیوسٹی کے بورڈ آف گورنرز کے اراکین پروفیسر ڈاکٹر سہیل افضل، اسلم سنجرانی اور بیرسٹر شاہدہ جمیل بھی اس موقع پر موجود تھے۔گورنر سندھ نے کہا کہ آج کے دور میں جدت پسندی کامیابی کی ضمانت سمجھی جاتی ہے اور انھیں یہ دیکھ کر بہت خوشی ہوئی ہے کہ محمد علی جناح ونیورسٹی جو کہ بانی پاکستان کے نام سے منسوب ہے یہاں جدت پسندی کو بہت اہمیت حاصل ہے اور یہاں کے اساتذہ طلبہ کی بہترین تعلیم اور تحقیق کے کام کی حوصلہ افزائی کے لئے بڑی محنت سے کام کر رہے ہیں۔انہوں نے ڈگری حاصل کرنے والے طلبہ کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ وہ اب اپنی عملی زندگی کے سفر کا آغاز کررہے ہیں اور انھیں پوری امید ہے کہ وہ اپنی لگن،محنت اور اپنی صلاحیتوں کے بھر پور اظہار کی بنا پر ان کا مستقبل انتہائی روشن اور تابناک ہوگا۔ گورنر سندھ نے ڈگری وصول کرنے والے طلبہ کے والدین کو بھی مبارکباد پیش کی اور کہا کہ جس ملک میں ایک عام آدمی کو پرائمری تعلیم حاصل کرنے کی سہولت میُسر نہیں ہے وہاں انہوں نے اپنے بچوں کو اعلیٰ تعلیم دلواکر ملک و قوم کی ایک بہتر خدمت کی ہے کیونکہ ایک تعلیمیافتہ معاشرہ ملک کی ترقی و خوشحالی کے لئے ایک اہم رول ادا کرسکتاہے۔انہوں نے ماجو کے صدر پروفیسر ڈاکٹر زبیر شیخ کی تعلیم کے شعبہ میں نمایاں کارکردگی کی تعریف کی اور کہا کہ ان کی ولولہ انگیز قیادت میں محمد علی جناح یونیورسٹی کا شمار اب ملک کی بہترین جامعات میں کیا جاتا ہے۔قبل ازیں کانوکیشن کے آغاز پر یونیورسٹی کے صدر پروفیسر ڈاکٹر زبیر شیخ نے مہمان خصوصی گورنر سندھ محمد زبیر کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ ماجو میں جیو،محبت اور دوسروں سے سیکھنے کا عزم کو پیش نظر رکھا جاتا ہے اور ہم اپنے طلبہ کو بہتر سے بہتر تعلیمی ماحول فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ انکی تحقیق کاموں کو حوصلہ افزائی پر بھی بھر پور توجہ دیتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم اپنا تعلیمی نصاب مرتب کرتے وقت ملک کی جاب مارکیٹ کے رحجانات کو سامنے رکھتے ہیں تاکہ ہمارے طلبہ تعلیم مکمل ہوجانے کے بعد بغیر کسی ہچکچا ہٹ کے اپنی بہترین صلاحیتوں کا مظاہرہ کرسکیں۔انہوں نے کہا کہ اپنے معیار تعلیم کومزید بہتر بنانے کے لئے ہم نے ترکی،ملائیشیا،امریکہ اور دیگر ممالک کی یونیورسٹیوں سے تعلیم و تحقیق کے شعبوں میں اشتراک کار کے لئے مفاہمتی یادداشتوں پر دستخط کئے ہیں ،اسی طرح انڈسٹری کے ساتھ بہتر روابط رکھنے کے لئے آٹو مو بائل،فارموسٹیکل،بنکنگ اور دیگر شعبوں کے ساتھ تعاون کے بھی معاہدے کئے ہیں۔ اس موقع پر انہوں نے ڈگری حاصل کرنے والے طلبہ اور انکے والدین کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے ان کے لئے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -