62ون ایف کا فیصلہ بھی طیار ہ سازش کیس کے فیصلے کی طرح ہی ہے :مریم اورنگزیب

62ون ایف کا فیصلہ بھی طیار ہ سازش کیس کے فیصلے کی طرح ہی ہے :مریم اورنگزیب
62ون ایف کا فیصلہ بھی طیار ہ سازش کیس کے فیصلے کی طرح ہی ہے :مریم اورنگزیب

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات اور مسلم لیگ کی رہنما مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ 62ون ایف کا فیصلہ بھی ویسا ہی ہے جیسا فیصلہ طیارہ سازش کیس میں نواز شریف کے خلاف آیا تھا ۔ان کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ نے منتخب وزیراعظم کو اقامے پر نکالا ،ابھی اس معاملے پر نیب عدالت میں ٹرائل جاری ہے کہ اسی دوران 62ون ایف کا فیصلہ بھی آگیا ،یہ و ہی مذاق ہے جو ماضی میں وزرائے اعظم کے ساتھ ہوا۔

62ون ایف کیس کے فیصلے کے بعدمیڈ یا سے گفتگو کرتے ہوئے مریم اورنگزیب نے کہا کہ علی بابا چالیس چوروں نے نا مکمل دستا ویزات پر جے آئی ٹی رپورٹ پیش کی ،جس کیس میں نواز شریف کو نا اہل قرار دیا گیا اس میں 40نا معلوم افراد نے رپورٹ لکھی ،واٹس ایپ پر جے آئی ٹی کس نے بنائی سپریم کورٹ جواب دینے سے قاصر ہے ،ابھی تک نواز شریف پر ایک روپے کی بھی کرپشن کا الزام نہیں لگ سکا لیکن انہیں تا حیات نا اہل قرار دے دیا ،ایسے فیصلوں کا خمیازہ ماضی میں بھی پاکستانی عوام کو بھگتنا پڑا ،پاناما فیصلے کی طرح پاکستانی عوام اس فیصلے کو بھی قبول نہیں کرے گی ۔

انہوں نے کہا کہ یہ بزدل لوگ ہیں جو سیاسی لیڈرز کو اس طرح سے نا اہل قرار دے کر سمجھتے ہیں کہ سیاست ختم ہو گئی لیکن اس طرح سے سیاست کا نیا دور شروع ہو جاتا ہے ،آج بھی ایسا ہی ہوا ۔انہوں نے مزید کہا کہ پاکستانی اداروں اور سپریم کورٹ کی عزت لازم ہے ،میں نے کسی کے خلاف کوئی ہتک آمیز بات نہیں کی ۔

مزید : قومی