لوگ کرونا سے زیادہ شکار حکومتی قرنطینہ سینٹرز میں ہو رہے ہیں: یاسمین راشد

  لوگ کرونا سے زیادہ شکار حکومتی قرنطینہ سینٹرز میں ہو رہے ہیں: یاسمین راشد

  

لاہور (جنرل رپورٹر) صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا ہے کہ صوبہ پنجاب میں لاک ڈاؤن کو مزید بڑھانے کا فیصلہ نیشنل سکیورٹی کونسل کے اجلاس میں کیا جائیگا۔ صوبہ پنجاب کے قرنطینہ سینٹرز میں سب سے زیادہ افراد کرونا وائرس کا شکار ہو رہے ہیں۔ متاثر ہونے والے زیادہ علاقوں میں لاہور، گوجرانوالہ، گجرات، راولپنڈی اور جہلم شامل ہیں۔اپنے ایک بیان میں یا سمین راشد نے کہا کہ متاثرہ علاقوں کے لاک ڈاؤن میں نرمی نہیں کی جائیگی۔ جی ٹی روڈ بیلٹ پر کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد سب سے زیادہ ہے۔ پنجاب میں اب تک 36 ہزار مشتبہ مریضوں کے تشخیصی ٹیسٹ کئے جا چکے ہیں۔ پاکستان نے جنوبی ایشیا میں سب سے زیادہ کرونا وائرس کے تشخیصی ٹیسٹ کئے۔ پنجاب میں کرونا وائرس کے تین سو کے قریب کنفرم مریض صحتیاب ہو کر اپنے گھروں کو واپس جا چکے ہیں۔صوبائی وزیر صحت نے بتایا کہ لاہور کے بعض علاقوں کو کرونا وائرس کے کیسز بڑھنے پر مکمل سیل کیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ سبزی منڈیوں میں افراد کے تشخیصی ٹیسٹ کروائے جا رہے ہیں۔

یاسمین راشد

مزید :

صفحہ آخر -