دبئی میں لاک ڈاﺅن کے دوران حکومت دبئی کی طرف سے اشیائے خوردونوش کی فراہمی

دبئی میں لاک ڈاﺅن کے دوران حکومت دبئی کی طرف سے اشیائے خوردونوش کی فراہمی
دبئی میں لاک ڈاﺅن کے دوران حکومت دبئی کی طرف سے اشیائے خوردونوش کی فراہمی

  

دبئی (طاہر منیر طاہر) حالیہ موذی وباءکرونا وائرس کے پھیلاﺅ کو روکنے کے لیے دبئی میں لاک ڈاﺅن چل رہا ہے۔ سرکاری اور غیر سرکاری ملازمین اور سکولوں کے علاوہ دیگر اداروں کے کارکنوں کو بھی کام پر آنے سے روک دیا گیا ہے اور ہدایت کی گئی ہے کہ وہ اپنے گھروں میں رہیں تاکہ اس موذی مرض کے پھیلاﺅ کو روکا جاسکے۔

لاک ڈاﺅن کی سختی کے باوجود لوگوں کو اشیائے خوردونوش کی اشیاءخریدنے، فارمیسی سے ادویات لینے یا کسی انتہائی ضروری کام سے گھروں سے باہر نکلنے کی اجازت دی گئی ہے۔ لاک ڈاﺅن کے اوقات میں گھروں سے باہر نکلنے پر جرمانہ اور دیگر سزائیں ہیں جبکہ پولیس سے خصوصی اجازت نامہ کے حصول کے بعد گھروں سے باہر جایا جاسکتا ہے۔

جن علاقوں میں لاک ڈاﺅن پر سختی سے پابندی کرائی جارہی ہے وہاں مقیم لوگوں کو اشیائے خوردونوش حکومت دبئی کی طرف سے پہنچایا جارہا ہے۔ دبئی پولیس کے اہلکار ،دیگر محکموں کے کارندے اور رضا کار لاک ڈاﺅن کے دوران گھر بیٹھے افراد کو ضروری اشیاءفراہم کررہے ہیں تاکہ لوگوں کو گھروں سے باہر نہ نکلنا پڑے اور اس موذی مرض پر قابو پایا جاسکے۔ اس ضمن میں لوگوں کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ بلا ضرورت باہر نہ نکلیں، باہر نکل کر ہر صورت حفاظتی ماسک پہنیں، آپس میں فاصلہ رکھیں اور گھر پر ہاتھوں کی صفائی کا خاص خیال رکھیں۔

جراثیم سے پاک کرنے کے لیے دبئی کی مختلف جگہوں خاص طور پر مسجدوں میں جرائم کش سپرے کیا جارہا ہے۔ دبئی کو کرونا سے محفوظ کرنے کے لیے اقدامات اور لوگوں کو ان کی گھر کی دہلی پر راشن فراہم کرنے پر لوگوں نے حکومت دبئی کا شکریہ ادا کیا ہے۔

مزید :

عرب دنیا -