پیف سکولز کی ادائیگیوں میں کٹوتی کا معاملہ، وزیر تعلیم اور پیف پارٹنرز  آمنے سامنے، مراد راس  کو مناظرے کا چیلنج

پیف سکولز کی ادائیگیوں میں کٹوتی کا معاملہ، وزیر تعلیم اور پیف پارٹنرز ...
پیف سکولز کی ادائیگیوں میں کٹوتی کا معاملہ، وزیر تعلیم اور پیف پارٹنرز  آمنے سامنے، مراد راس  کو مناظرے کا چیلنج

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پیف سکولز کی ادائیگیوں میں کٹوتی کے معاملے پر وزیر تعلیم اور پیف پارٹنرز  آمنے سامنے آگئے۔  پیف پارٹنرز سکولز مالکان نے وزیر تعلیم  کو مناظرے کا چیلنج کردیا۔

پیف پارٹنرز کا کہنا ہے کہ وزیر تعلیم کا پیف میں 2 لاکھ بوگس طلبہ  کی انٹری  کا  الزام جھوٹ کا پلندہ ہے ، پیف میں بے ضابطگیاں ہوئی ہیں تو  ثبوت سامنے لائے جائیں ،  مراد راس پیف کو ختم کرکے غریب بچوں سے سستی تعلیم چھین رہے ہیں۔

صدر پیف پارٹنرز شبیر ہاشمی کا کہنا ہے کہ وزیر تعلیم پیف سکولز کو ختم کرکے انصاف سکولز پروگرام لانا چاہتے ہیں ، پنجاب ایجو کیشن فاؤنڈیشن کے تحت چلنے والے سکولز مالکان فنڈز نہ ملنے کے باعث پر یشانی میں مبتلا ہیں۔ حکومت نے 2 لاکھ 89 ہزار بچوں کو بوگس قرار دے کر فنڈز روک لیے ہیں۔  حکومت کی جانب سے فنڈز نہ ملنے سے سینکڑوں اساتذہ تنخواہوں سے محروم ہیں ، وزیر اعلیٰ پنجاب اور وزیراعظم سے اپیل ہے کہ معاملے کا نوٹس لیا جائے ۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -