لاہو ہائیکورٹ نے تحریک انصاف کو غیر آئینی لانگ مارچ اور دھرنے سے روک دیا

لاہو ہائیکورٹ نے تحریک انصاف کو غیر آئینی لانگ مارچ اور دھرنے سے روک دیا
لاہو ہائیکورٹ نے تحریک انصاف کو غیر آئینی لانگ مارچ اور دھرنے سے روک دیا

  


لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) لاہور ہائیکورٹ نے تحریک انصاف کو غیر آئینی طریقے سے لانگ مارچ کرنے اور دھرنے سے روک دیا ہے اور کہا ہے کہ اسلام آباد میں آئین سے ماورا اقدامات نہ کئے جائیں۔ تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس خالد محمود خان کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے آزادی مارچ سے متعلق درخواست کی سماعت کی اور مختصر فیصلہ سنایا جس میں کہا گیا ہے کہ تحریک انصاف غیر آئینی طریقے سے لانگ مارچ نہ کرے اور نہ ہی دھرنا دے، موجودہ حالات میں آزادی مارچ نہیں کیا جا سکتا، ضرب عضب آپریشن کے نتیجے میں طالبان کا حملہ کسی وقت بھی ہو سکتا ہے۔ واضح رہے کہ تحریک انصاف کے لانگ مارچ کے خلاف لاہور ہائیکورٹ میں پٹیشن دائر کی گئی تھی جس میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ موجودہ حالات میں دہشت گردی کا بڑا واقعہ ہو سکتا ہے اور قیمتی جانیں ہو سکتی ہیں۔ پاکستان تحریک انصاف کے وکیل نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ احتجاج ہر پارٹی کا حق ہے، تحریک انصاف پہلے ہی واضح کر چکی ہے کہ کوئی بھی اقدام ماورائے آئین وقانون نہیں ہو گا۔

مزید : لاہور /اہم خبریں


loading...