صحت مند عادات جو آپ ایک منٹ میں اپنا سکتے ہیں

صحت مند عادات جو آپ ایک منٹ میں اپنا سکتے ہیں
صحت مند عادات جو آپ ایک منٹ میں اپنا سکتے ہیں

  


نیویارک(نیوزڈیسک) انسانی صحت کی بربادی میں سب سے بڑا ہاتھ خود انسان کی لاپرواہی اور بری عادات کا ہوتا ہے۔ دوران سفر سیٹ بیلٹ باندھنا یا کھانے سے قبل ہاتھ دھونے میں زیادہ وقت نہیں لگتا لیکن ایسا کرنے سے آپ خود کو مصائب سے بچا سکتے ہیں۔ تو یہاں ہم آپ کو ایسی اچھی عادات کے بارے میں بتائیں گے، جن کو اپنانے میں صرف چند سیکنڈز لگتے ہیں، لیکن ان کے فوائد سے آپ ساری زندگی فیض یاب ہو سکتے ہیں۔

جوتے دروازے پر اتاریں: جوتے ہمیشہ دروازے پر اتاریں، کیوں کہ اس سے آپ خود اور دیگر گھر والے مختلف مسائل سے محفوظ رہیں گے۔ جوتوںکے ساتھ لگی گندگی اور مختلف کیمیکلز گھر میں مختلف بیماریوں کو جنم دے سکتی ہے، لہذا بیماریوں سے بچنے کے لئے اپنے گھر کی صفائی کا خصوصی خیال رکھیں۔

چھینکنا: چھینکتے یا کھانستے وقت اگر آپ کے پاس ٹشوپیپر یا رومال نہیں ہے تو اپنے منہ کو بازوں میں چھپا لیں، اس سے آپ کے ہاتھ محفوظ رہیں، کیوں کہ جراثیم ہاتھوں کے ذریعے انسانی جسم میں منتقل ہو سکتے ہیں۔ اس کے علاوہ چھینکتے وقت ناک کو ڈھانپنا اس لئے بھی ضروری ہے کہ آپ کے اندر سے نکلنے والے جراثیم ہوا کے ذریعے دوسروں کو متاثر نہ کریں۔

آنکھوں کا وقفہ: اکثر ملازمین اور طالب علم سارا سارا دن کمپیوٹر کی سکرین کے سامنے بیٹھے رہتے ہیں، جس کی شعاعیں بینائی کو متاثر اور سردرد کا باعث بن سکتی ہیں، لہذا بینائی کی حفاظت کے لئے ضروری ہے کہ کمپیوٹر پر کام کے دوران چھوٹے چھوٹے وقفے لئے جائیں، ماہر امراض چشم اس ضمن میں 20 منٹ بعد وقفہ لینے کی ہدایت کرتے ہیں، یعنی 20 منٹ آپ کو ایک بار ضرور اپنی آنکھیں سکرین سے ہٹا لینی چاہیں۔

سن سکرین کا استعمال: سن سکرین یعنی جلدی حفاظت والی کریم کو صرف مخصوص موسم میں ہی نہ لگائیں بلکہ اس عادت کو سارا سال اپنائے رکھیں، کیوں کہ حفاظتی تدابیر اختیار نہ کرنے سے بعض اوقات جلدی کینسر کا خطرہ لاحق ہو جاتا ہے۔

پانی کا استعمال: ایک روز میں 8 گلاس پانی پینا توضروری ہے، لیکن اس سے زیادہ استعمال کا بھی کوئی حرج نہیں۔ انسانی جسم کا 60 فیصد دارومدار پانی پر ہے، کیوں کہ یہ پانی ہی ہے جو غذا ہضم، جسمانی درجہ حرارت خون کی گردش کو معمول پر رکھتا ہے۔

مائیکروویو کی صفائی: عام طور پر کہا جاتا ہے کہ ٹائلٹ جراثیم کا گھر ہوتا ہے، لیکن مختلف تحقیقات نے یہ ثابت کیا ہے کہ مائیکروویو جراثیم کے فروغ کی فہرست میں سب سے اوپر ہے، کیوں کہ مائیکروویو میں دال، سبزی اور گوشت سمیت ہر طرح کی چیز بنائی جاتی ہے اور یہ تمام چیزیں بیکٹیریا کی نشوونما کا ذریعہ ہیں۔ تو اگر آپ جراثیم پر قابو پانا چاہتے ہیں تو اسے روزانہ صاف کریں۔

غصہ کی صورت میں گنتی: غصہ آنے کی صورت میں 20 تک گنتی گنیں اور اس دوران لمبے لمبے سانس لیں۔ یہ نہایت سادہ ترکیب جسمانی درجہ حرارت کو نارمل کرکے آپ کو ٹھنڈا کر دے گی۔

زبان کی صفائی: دانتوں کی صفائی پر تو ہر کوئی زور دیتا ہے، لیکن زبان کی صفائی کی طرف کسی کا جلدی دھیان نہیں جاتا، حالاں کہ متعدد تحقیقات نے یہ ثابت کیا ہے کہ زبان کا پچھلا حصہ منہ میں بیکٹیریا اور جراثیم کی پیدائش کی موزوں ترین جگہ ہے۔ لہذا دانتوں کی صفائی کے دوران برش کو پیچھے سے آگے کی طرف زبان پر بھی پھیریں۔

مزید : تعلیم و صحت


loading...