بھارتی موسیقار نے اسلام قبول کرنے کی وجہ بتا دی

بھارتی موسیقار نے اسلام قبول کرنے کی وجہ بتا دی
بھارتی موسیقار نے اسلام قبول کرنے کی وجہ بتا دی

  


نیودہلی (نیوز ڈیسک) بھارت کے شہرت یافتہ موسیقار الاپا راجا کے ہونہار بیٹے اور مشہور شاعر و موسیقار یوان شنکر راجا نے اسلام قبول کرلیا ہے۔ چونتیس سالہ یوان شنکر کا شمار جنوبی بھارت کی فلم انڈسٹری کے بہترین موسیقاروں میں ہوتا ہے اور وہ 16 سال کی عمر میں ایک تامل فلم کے میوزک دینے کے بعد بھارت کے کم عمر ترین موسیقار کا اعزاز بھی حاصل کرچکے ہیں۔ماضی میں بھارت کے مشہور موسیقار اے آر رحمٰن نے بھی اسلام قبول کیا تھا۔

 معروف بھارتی اخبار ”ٹائمز آف انڈیا“ نے جب ان سے پوچھا کہ وہ اپنے ہندو مذہب کو چھوڑ کر اسلام کی طرف کیسے مسائل ہوگئے تو انہوں نے تفصیل کے مطابق وہ تمام روحانی واردات بیان کی جو انہیں ہدایت کی طرف لے کر آئی۔ یوان شنکر نے بتایا کہ یہ ایک روحانی سفر تھا جو اس کی ماں کی وفات سے شروع ہوا۔ اس کا باپ ایک کٹر ہندو تھا اور گھر کا ماحول بھی ہندو رنگ میں رنگا ہوا تھا لیکن اس کے ذہن میں ہمیشہ یہ سوال رہا کہ انسانوں کی تقدیر کا مالک خدا بتوں میں کیسے ہوسکتا ہے۔ جب وہ اپنے کام کے سلسلے میں ممبئی آیا ہوا تھا تو والدہ کی علالت کی اطلاع ملی، وہ واپس چنائی پہنچا اور ماں کو ہسپتال لے کر گیا۔ یوان شنکر نے بتایا کہ جب وہ ہسپتال میں اپنی ماں کے ہاتھ پکڑ کر بیٹھا تھا تو اچانک وہ ہاتھ بے جان ہوگیا اور اس کی ماں جہانِ فانی سے رخصت ہوگئی۔ ماں کی اچانک وفات نے اس کے ذہن میں روح اور مابعدالطبیات کے سوال اور بھی گہرے کردئیے۔ اس کی پرملال صورت حال کو دیکھ کر مکہ سے واپس آنے والے ایک دوست نے جائے نماز تحفے میں دیا اور خدا سے لو لگانے کی تلقین کی۔ یوان کا کہنا ہے کہ جب وہ جائے نماز پر بیٹھا تو اسے یوں محسوس ہوا کہ اس کی ماں کی روح اسے ہاتھ پکڑ کر کہہ رہی ہے کہ اسلام کے شجر سایہ دار تلے آجاﺅ تاکہ دنیا کے مصائب و آرام سے نجات پالو۔ اس نے قرآن کا مطالعہ جاری رکھا اور اسلامی طرز زندگی اور عبادات کو بھی اختیار کرلی اور بالآخر 2014ءمیں باقاعدہ طور پر اسلام قبول کرلیا۔ یوان نے اس عزم کا بھی اظہار کیا ہے کہ وہ عنقریب اپنے پاسپورٹ اور دیگر قانونی دستاویزات پر اپنا ہندو نام تبدیل کرکے اسلامی نام رکھ لے گا۔

مزید : انسانی حقوق


loading...