انگلینڈ کی برتری ختم،پاکستان کو بڑی سبقت کیلئے جدوجہد درکار

انگلینڈ کی برتری ختم،پاکستان کو بڑی سبقت کیلئے جدوجہد درکار

  

( اوول لندن)تجزیہ : راجہ اسد خان

اسد شفیق اور یونس خان کی سنچریوں کے باوجود پاکستان کو انگلینڈ پر بڑی سبقت کیلئے غیر معمولی کوشش کرنا ہوگی۔ وکٹ پر یونس خان اور سرفراز احمد موجود ہیں اگر یہ دونوں آج لنچ تک کھیلے تو پاکستان انگلینڈ پر حاوی ہو جائے گا۔ پاکستان کی طرف سے اس سے پہلے یاسر شاہ بچت نائٹ واچ کا بہترین کردار ادا کرتے ہوئے چھبیس رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ انہوں نے اظہر علی کے ساتھ سکور کو تین سے باون تک پہنچایا۔ اظہر علی اچھا کھیلے اور انچاس رنز پر آؤٹ ہوئے۔ اگرچہ انگلینڈ کی فیلڈنگ کا معیار وہی تھا جو پاکستان کا فیلڈنگ کرتے وقت تھا۔ پاکستان نے اس کا پورا فائدہ اٹھایا جیسے پاکستان کا سکور آگے بڑھا میچ پر ان کی گرفت مضبوط ہوتی نظر آئی انگلینڈ کے فیلڈر اور باؤلر بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئے اس کا اندازہ ایک انتہائی غیر ضروری ٹی وی انٹرویو دیکھ کر ہوا جب ایل بی ڈبلیو کی اپیل کی گئی بلے میں صاف نظر آیا کہ گیند بیٹ کے درمیانی حصے پر لگی ہے اس منظر کو ٹی وی پر دیکھ کر انگریز صحافی قہقہے لگاتے رہے چائے کے وقفے کے بعد اس سیریز میں پہلی مرتبہ انگلش باؤلر بے بس نظر آئے۔ یونس خان اور اسد شفیق کی رفاقت نے پاکستان کو ایک تصوراتی جیت دی تھی۔ ان کی ایک سو پچاس رنز کی پارٹنر شپ نے پاکستان کو ایک مضبوط پوزیشن میں کھڑا کر دیا۔ اگر مصباح الحق بھی فیلڈنگ کا دباؤ برقرار رکھتے ایک سو دس رنز پر پانچ وکٹیں گرنے کرنے کے بعد آف سائیڈ اور آن سائیڈ پر چوکے دوکے سے پہلے فیلڈر کھڑے کر دئیے گئے۔ باؤلر مسلسل باؤنسر اور شارٹ گیندیں کرنے لگے۔ بعض باؤنسر پر چوکے بھی لگے۔ پاکستان نے تیس ایکسٹرا رنز دیے۔ یونس خان نے شاندار پرفارمنس دے کر اپنے اوپر بڑھتے دباؤ کو ختم کر دیا۔ ان کی بعض شارٹس انتہائی دلکش تھیں پاکستان کی مجموعی رننگ بغیر کسی دباؤ کے تھی۔ پاکستان کے 300 رنز میں انتالیس چوکے شامل تھے جبکہ اسی دوران تین چھکے بھی لگے۔ پاکستان نے کسی بھی موقع پر رن ریٹ ڈراپ نہیں ہونے دیا۔ نئے کھلاڑی افتخار احمد ایک چوکا لگانے کے بعد شارٹ پچ پر پل کرنے کی کوشس میں آؤٹ ہوئے۔ ان سے پہلے مصباح بھی آؤٹ ہوچکے تھے۔ اس طرح انگلینڈ نے نئے گیند کا پورا فائدہ اٹھایا اوپر تلے مصباح اور افتخار احمد کی وکٹ حاصل کی۔ تیسرے اوور کا کھیل انتہائی دلچسپ ہوگا وکٹ بالکل سیدھی ہے پاکستان کے بقیہ بیٹسمینوں کو وہاں سے زیادہ رنز بنانا ہونگے۔ پاکستان کی اس وقت سبقت صرف 12 رنز ہے۔

مزید :

تجزیہ -