کرنٹ سے ہلاکت، سی ای او کے الیکٹرک کیخلاف قتل کا پہلا مقدمہ درج

  کرنٹ سے ہلاکت، سی ای او کے الیکٹرک کیخلاف قتل کا پہلا مقدمہ درج

  

 کراچی(این این آئی)کراچی کے علاقے ڈیفنس میں کے الیکٹرک کے سب اسٹیشن میں کرنٹ لگنے سے جھلس کرجاں بحق ہونے کے واقعہ کامقدمہ کے الیکٹرک کے سی ای او اورڈسٹری بیوشن ہیڈ سمیت4 افسران کیخلاف قتل بالسبب کے تحت ڈیفنس تھانے میں درج کرلیا گیاہے۔ڈیفنس تھانے کے علاقے ڈیفنس فیز سیون ایکسٹینشن میں کے الیکٹرک کے سب اسٹیشن پرکرنٹ لگنے سے جھلس کر جاں بحق ہونے والے نوجوان 19 سالہ فیضان ولد فدا محمد کی ہلاکت کا مقدمہ الزام نمبر 2020/543 بجرم 322 کے تحت کے الیکٹرک کے سی ای او مونس علوی، ڈسٹری بیوشن بیڈ عامر ضیا ء، سینئر سیکیورٹی آفیسر آئی بی سی ڈیفنس فہیم اور اسسٹنٹ منیجر ڈیفنس اویس کیخلاف متوفی نوجوان فیضان ولد فدا محمد کے چچا محمدفیاض ولد بابو غلام کی مدعیت میں درج کرلیا گیا۔متوفی فیضان کے چچا نے پولیس کو بتایا کہ معلوم کرنے پر انہیں پتہ چلا کہ فیضان صبح ساڑھے آٹھ بجے کے قریب کے الیکٹرک کے سب اسٹیشن کے پاس تصویر کھینچ رہا تھا اور وہاں تھوڑا پانی موجود تھا اورسب اسٹیشن پر گیٹ بھی نہیں تھا جہاں سے کرنٹ پانی میں آیا اور فیضان کو کرنٹ لگا اور فیضان فوت ہوگیا، انھوں نے بتایا کہ کے الیکٹرک حکام کی غفلت لا پروائی اور بغیر حفاظتی اقدمات نہ ہونے کی وجہ سے واقعہ پیش آیا لہذا کے الیکٹرک کے حکام خلاف قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے۔

سی ای او کے الیکٹرک

مزید :

صفحہ آخر -